سعودی عرب میں اساتذہ کے لیے اسپیشلائزیشن سے باہر مضمون پڑھانے کی راہ ہموار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کی وزارت تعلیم عوامی تعلیمی نظام کے اندر ایک مضمون رکھنے کا ارادہ رکھتی ہے، جس سے وہ کسی بھی استاد کو ان کی تخصصات سے باہر کورسز پڑھانے کے لیے تفویض کرنے کی اجازت دیتا ہے۔ اس تبدیلی کے کچھ مالی فواید بھی ہوں گے۔

’العربیہ‘ کواپنے ذرائع سے معلوم ہوا کہ آرٹیکل سترہ کے متن پر وزارت عمومی تعلیمی نظام میں شامل کرنے پرغورکررہی ہے۔ وزارت کو یہ حق حاصل ہے کہ وہ اساتذہ میں سے کسی کو بھی ان کی تخصص سے باہر کور سزپڑھانے کے لیے نہیں کام تفویض کرے اوراس کا تعین کرے۔ اس کے لیے اساتذہ کو مالی فوائد اور وزارت اساتذہ کو ان کی مہارت اور پیشہ ورانہ تقاضوں سے ہٹ کر کورسز سکھانے کی بھی کوشش کرے گی۔

توقع ہے کہ نئے نظام کا نفاذ تعلیمی سال کے آغاز کے ساتھ ہی شروع ہو جائے گا، کیونکہ یہ فیصلہ تعلیمی معیار میں اضافے کے پیکیج کے ایک حصے کے طور پر آیا ہے جسے وزارت تعلیم سعودی تعلیمی معیار کو آگے بڑھانا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں