اردن کی عقبہ بندرگاہ پرزہریلی گیس کا اخراج؛13 افراد ہلاک، 200 سے زیادہ زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اردن کی عقبہ بندرگاہ میں پیر کے روز زہریلی گیس کا ایک سلنڈرپھٹنے سے تیرہ افراد ہلاک اور دو سو سے زیادہ زخمی ہو گئے ہیں۔

سرکاری ٹی وی سے نشر کی گئی فوٹیج کے مطابق ایک بڑا سلنڈر کرین کے ذریعے ٹرک پر اتارتے ہوئے ایک بندرگاہ پر لنگرانداز ایک جہاز پر گرا تھا جس کے نتیجے میں زوردار دھماکا ہوا تھا اور پیلے رنگ کی زہریلی گیس تیزی سے ہر طرف پھیل گئی۔

اردن کے ایک عہدے دار فیصل الشبول نے واقعے میں دس ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے۔اس سے پہلے ہلاکتوں کی تعداد پانچ بتائی گئی تھی۔

سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق وزیر اعظم بشرالخصاونہ اور وزیر داخلہ مازن الفرایا حادثے کی جگہ پر پہنچ گئےہیں ۔شہری دفاع کے ترجمان عمرو السرطاوی نے اس سے قبل بتایا تھا کہ زہریلی گیس سے بھرا ٹینک گرنے سے 234 افراد زخمی ہوئے ہیں۔

دھماکے سے پھٹنے والا سلنڈر
دھماکے سے پھٹنے والا سلنڈر

سرطاوی نے مزید کہا کہ واقعے کے بعد ماہرین اور شہری دفاع کی ٹیمیں خطرناک مواد سے نمٹ رہی ہے۔زہریلی گیس کے اخراج کے بعد عقبہ کے جنوبی ساحل کو خالی کرا لیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ اردن کی عقبہ بندرگاہ ملک کا واحد سمندری ٹرمینل ہے اور اس کی بیشتر درآمدات اور برآمدات اسی کے ذریعے ہوتی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں