مکہ مکرمہ کے 10 اسپتال اور 82 مراکز صحت حج سیزن کے لیے تیار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مکہ مکرمہ ہیلتھ کمپلیکس نے حج کے سیزن کے لیے تیاریوں کا اعلان کیا ہے۔ وزارت صحت کے زیر نگرانی تنظیمی منصوبوں کے مطابق وزارت صحت کے زیرانتظام اعلیٰ ترین طبی خدمات فراہم کرنے اورحج سیزن میں انہیں آپریشنل حالت میں لانے کا اعلان کیا ہے۔

مکہ معظمہ میں 10 اسپتال اور 82 مراکز صحت حج سیزن کے لیے تیار کیے گئے پلانز کو عملی جامہ پہنانے کے لیے تمام تیاریاں مکمل کر لی ہیں اور تمام معاملات کو سیزن پلان میں اپنائے گئے طریقہ کار اور ہیلتھ میکنزم کے مطابق نمٹا دیا ہے۔

کیمپس کے تین ایمرجنسی مراکز میں حرم ایمرجنسی اسپتال اور اجیاد ایمر جنسی اسپتال مسجد الحرام کے اندر اور اس کے قریب دن میں 24 گھنٹے کام کریں گے۔ اس دوران عازمین حج کو عالمی معیار کے مطابق طبی سہولیات فراہم کی جائیں گی۔

ہیلتھ کمپلیکس نےبتایا کہ تربیت یافتہ کیڈرز اور مطلوبہ ضروریات سے لیس کرنے کے لیے تمام صلاحیتوں کو بروئے کار لایا اور کسی بھی ہنگامی صورت حال سے نمٹنے کے لیے بستروں اورانتہائی نگہداشت کے کمرے تیار کیے گئے ہیں۔

مکہ مکرمہ میں ہیلتھ مرکز سے منسلک تمام مراکز اور اسپتالوں کے درمیان کام ہموار اور انتہائی منظم انداز میں کیا جاتا ہے تاکہ ان کے ذریعے صحت کی خدمات فراہم کی جا سکیں اور مریضوں کو بروقت طبی امداد فراہم کی جا سکے۔

شاہ عبداللہ میڈیکل سٹی دل اور دماغی فالج کے امراض کے علاج کے لیے مختص ہے۔ اس اسپتال میں علاج کے لیے اہلیت کے انتظام اور طبی ہم آہنگی کے ذریعے مریضوں کو بین الاقوامی سطح پر متعین وقت کے مطابق مریضوں کو ان کے پاس منتقل کیا جاتا ہے۔

النور سپیشلسٹ اسپتال، شاہ فیصل اسپتال، شاہ عبدالعزیز اسپتال، حرا جنرل اسپتال، ابن سینا اسپتال، اجیاد اسپتال، میٹرنٹی اینڈ چلڈرن اسپتال اور شمالی مکہ کے سیکٹر (خلیص الکامل) کے اسپتال کو جدید طبی آلات اور مشینری سے آراستہ کیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں