مسجد حرام میں 200 طبی رضا کارچوبیس گھنٹے عازمین حج کی خدمت پر مامور

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی حکومت نے عازمین حج کی صحت کی حفاظت کے لیے غیر معمولی سہولیات فراہم کی ہیں۔ اس ضمن میں مسجد حرام میں عازمین حج کی مدد کے لیے طبی عملے کے 200 رضا کار مقرر ہیں جو چوبیس گھنٹے اللہ کے مہمانوں کی طبی دیکھ بھال کرتے ہیں۔ حکومت نے طبی ٹیموں اورعازمین حج کے درمیان رابطے اور بات چیت کے لیے مختلف زبانوں میں ترجمہ کی سہولت بھی مہیا کی ہے۔

مکہ مکرمہ ریجن میں صحت کے امور کے جنرل ڈائریکٹوریٹ کے نگران محکمہ صحت کے رضاکار مُحاسن شعیب نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کو بتایا کہ 200 مرد اور خواتین رضاکار حرم مکی میں چوبیس گھنٹے کام کر رہے ہیں۔ یہ طبی عملہ مختلف زبانوں میں مترجمین کی موجودگی میں مریضوں اور ڈاکٹروں کے درمیان رہ نمائی اور رابطے کے تحت کام کرتا ہے۔

انہوں نے نشاندہی کی کہ رضاکارانہ پروگرام کا مقصد صحت کے شعبے کے ملازمین کے لیے رضاکارانہ طور پر کام کرنے اور کمیونٹی کی خدمت کے لیے منظم مواقع پیدا کرنا، مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں حجاج کو بہتر صحت کی دیکھ بھال فراہم کرنا اور مکہ مکرمہ میں صحت کے امور کے لیے افرادی قوت کی مدد میں تعاون کرنا ہے۔

محاسن نے مزید کہاکہ طبی عملہ مسجد حرام میں آنے والے عازمین کا بلڈ پریشر چیک کرنے کے ساتھ فشار خون کے مریضوں کو بتدائی طبی امداد فراہم کرتا ہے۔زخموں کی مرہم پٹی، نفسیاتی مدد، آگاہی اور صحت سے متعلق معلومات فراہم کرتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں