.

سعودی پراسیکیوشن کا ملازمہ کو زدو کوب کرنے کے واقعے تحقیقات کا حکم

متاثرہ خاتون کوفوری دارالامان منتقل کرنے اور اسےقانونی تحفظ فراہم کرنے کی ہدایت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے پبلک پراسیکیوشن نے مملکت کے علاقے حائل میں ایک خاتون ملازمہ پر اس کے مالکان کی طرف سےمبینہ تشدد کے واقعے کا نوٹس لیتے ہوئے متعلقہ حکام کو اس کے بارے میں حقائق کی جان کاری کا حکم دیا ہے۔

سعودی پراسیکیوشن کے ایک ذریعے نے بتایا کہ ادارے نے حائل میں ایک خاتون ملازمہ پر تشدد سے متعلق اخبارات میں شائع خبر پر تحقیقات کا حکم دیا۔

ذریعے کا کہنا ہے کہ پبلک پراسیکیوشن نے مجاز کنٹرول اتھارٹی کو فوری طور پر اس معاملے کو مکمل کرنے کی ہدایت کی اور اس کا طریقہ کار اور کوڈ آف کرمنل پروسیجر کے آرٹیکلز (24-27-28) کے مطابق کیس کو پبلک پراسیکیوشن کو بھیجنے کو کہا ہے۔

ذریعے نے بتایا کہ پراسیکیوشن نے متاثرہ خاتون کو دارالامان میں منتقل کرنے اور انسداد انسانی اسمگلنگ کے قانون15کے مطابق قانونی حقوق فراہم کرنے کا بھی حکم دیا ہے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب کے علاقے حائل میں ایک خاتون گھریلو ملازمہ پر تین خواتین اور ایک مرد کی طرف سے تشدد کی خبر سامنے آئی تھی جس کانوٹس لینے کےبعد اس کی تحقیقات شروع کردی گئی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں