.

سعودی بجٹ میں سال کی دوسری سہ ماہی میں 78 ارب ریال کی اضافی آمدن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی وزارت خزانہ نے دوسری سہ ماہی کے بجٹ کے اصل اعداد و شمار کا اعلان کیا ہے، جس میں بتایا گیا کہ آمدنی 370.3 ارب ریال سے تجاوز کر گئی، جس میں تیل کی آمدنی بھی شامل ہے جو 250 بلین ریال سے زیادہ ہے۔

دوسری سہ ماہی میں نان آئل ریونیو کی مالیت 120 ارب ریال تھی۔ اس کے علاوہ 10.2 بلین ریال، انکم ٹیکس، منافع اور کیپٹل گین، 64 ارب ریال، اشیاء اور خدمات پر ٹیکس ریونیو اور 19 ارب ریال، دیگر ٹیکسز میں حاصل کیے گئے۔

العربیہ نے سعودی وزارت خزانہ کے حوالے سے جمعرات کو ایک رپورٹ میں بتایا ہے کہ مملکت کی دوسری سہ ماہی میں تیل کی آمدن 66.5 ارب ڈالر(250 ارب سعودی ریال) سے زیادہ رہی ہے۔

رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ مملکت نے اسی مدت میں 77.7ارب ڈالر(292 ارب سعودی ریال) سے زیادہ کے اخراجات کی اطلاع دی ہے۔

سعودی عرب کا 2022 کی پہلی شش ماہی میں فاضل بجٹ 135 ارب ریال سے مجاوزہوچکا ہے-اس میں2022 کی پہلی سہ ماہی میں 57.5 ارب ریال اور دوسری سہ ماہی میں 77.9 ارب ریال شامل ہیں۔

العربیہ کی رپورٹ کے مطابق 2022 کی پہلی شش ماہی میں سعودی عرب کی آمدن میں 43 فی صد اضافہ ہوا ہے اوراس کی مالیت 648.3 ارب ریال ہےجبکہ 2021 کے اسی عرصے میں اس کی مالیت 452.8 ارب ریال تھی۔

2022 کی دوسری سہ ماہی میں سعودی بجٹ نے 20.2 بلین ریال کی دوسری آمدنی حاصل کی۔

سعودی بجٹ سرپلس کی مالیت 2022 کی پہلی ششماہی میں 135 بلین ریال سے تجاوز کر گئی، جس میں 2022 کی پہلی سہ ماہی میں 57.5 بلین ریال اور دوسری سہ ماہی میں 77.9 بلین ریال شامل ہیں۔

2022 کی پہلی ششماہی میں کل محصولات میں 43 فیصد کا اضافہ دیکھا گیا، جو 2021 کی پہلی ششماہی میں 452.8 بلین ریال کے مقابلے میں 648.3 بلین ریال تک پہنچ گیا۔

2022 کی دوسری سہ ماہی کے لیے کل حقیقی اخراجات تقریباً 292.4 بلین ریال تھے، جو کہ 2021 کی دوسری سہ ماہی میں 292.45 بلین ریال کے مقابلے میں، 16 فیصد کا اضافہ ہے۔

سعودی بجٹ کے اعدادوشمار سے 2022 کی پہلی ششماہی کے اخراجات کا حجم 512.9 بلین ریال ہے، جو کہ 2021 کی اسی مدت میں 464.9 بلین ریال کے مقابلے میں 10 فیصد زیادہ ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں