اسرائیل اور فلسطینیوں میں سیاسی مذاکرات کرائے جانا ضروری ہیں: بین الاقوامی ریڈ کراس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اسرائیل اور غزہ میں جنگ بندی کو مستحکم کرنے کے لیے ریڈ کراس کی بین الاقوامی کمیٹی نے سیاسی مزاکرات شروع کرانے پر زور دیا ہے۔ مشرق وسطیٰ کے لیے ریڈ کراس کمیٹی کے ڈائریکٹر فیبریزیو کاربونی کے مطابق ' صرف سیاسی مذاکرات ہی مسائل کو کم کر سکتے ہیں۔ '

حالیہ اسرائیلی جنگی جارحیت سے پیدا ہونے والی تشویشناک صورت حال پچھلے سال کی گیارہ روزہ جنگ کے بعد ایک بد ترین واقعہ تھا۔ جس میں اسرائیلی اور غزہ سٹرپ کے درمیان تشدد ابھرا۔

ریڈ کراس کمیٹی کے ذمہ دار نے اس پس منظر میں کہا ' غزہ پر چھڑنے والی جنگ امید کے بحران کا سبب تھی ، اس کے نتیجے میں کرب اور تکلیف نے جنم لیا۔ اس بار بار کے انسانی المیے سے بچنے کے لیے سیاسی اقدامات ضروری ہیں اور یہ اقدامات لازما تیزی سے اور بھر پور طریقے سے ہونے چاہییں۔'

انہوں نے کہا تازہ جنگ کے انسانی نفسیات پر اثرات بھی اسی طرح تکلیف دہ رہے جیسے ماضی کی جنگوں کے نفسیاتی اثرات ہوتے رہے ہیں۔ جنگ انسانوں کی ذہنی صحت کے مسائل کا سبب بنتی ہے اور ان کی بہتری کے کاموں میں رکاوٹ بنتی ہے، ہر نئی جنگ اور نئے تصادم کے ہر نئے دور کے اثرات اسی نوعیت کے ہوتے ہیں۔

انہوں نے غزہ کے مسلسل تصادم کے ماحول یا جنگ کی زد پر رہنے کی وجہ سے بتایا ' جب تصادم رک جاتا ہے تو جنگ سے متاثرہ لوگ ذہنی صحت کے مسائل سے دوچار ہوتے ہیں ، غزہ میں یہ تناسب پانچ افراد میں سے ایک کا ہے، یعنی بیس فیصد ہے۔ دوہزار اکیس کی غزہ جنگ کے بعد اب تک چودہ ماہ کے دوران غزہ کے دونوں اطراف کے لوگ غیر یقینی صورتحال سے دوچار ہیں۔ انہوں نے غزہ کے مسلسل خطرات کی زد میں رہنے کی وجہ سے کہا ' یہاں کے نوجوان تھکاوٹ اور مایوسی کا شکار ہورہے ہیں۔ '

ڈائریکٹر ریڈ کراس کمیٹی نے کہا پچھلے سال غزہ کی جنگ کے بعد میں وہیں تھا ' میں جمال اور ان کے اہل خانہ کے ساتھ ان کے گھر کے ملبے کے پاس کھڑا تھا۔ انہوں مجھے مئی 2021 کی جنگ سے پہلے بھی ایک بار بلایا تھا۔ '

میں نے جنگ کے بعد لوگوں کو بے گھر اور خوف زدہ دیکھا۔ فطری طور پر جب کوئی اپنے مستقبل کو غیر یقینی دیکھتا ہے، پھر جدید انسانی تاریخ میں طویل قبضے کے ماحول میں رہنا ایک بہت مشکل کام ہے۔ ان غزہ والوں کے بارے میں ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ان کے اندر پائے جانے والی گہری مایوسی اور بہتر مستقبل دیکھنے میں ناکامی مجھے بہت پریشان کرتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں