.

ایلون مسک کا ایرانیوں کو انٹرنیٹ فراہم کرنے کا مشن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایک ایسے وقت میں جب ایران پولیس کی حراست میں ایک نوجوان خاتون کی موت پر بڑے پیمانے پر مظاہروں کا سلسلہ جاری SpaceX کے سی ای او ایلون مسک نے پیر کو ٹویٹر پر انکشاف کیا کہ کمپنی تہران پر عائد پابندیوں سے استثنیٰ کی درخواست کرے گی تاکہ ایران میں"Starlink" کے ذریعے سیٹلائٹ براڈ بینڈ سروس فراہم کی جا سکے۔

تاہم مسک نے یہ واضح نہیں کیا کہ اسٹار لنک کس ملک سے چھوٹ مانگے گا اور نہ ہی اس قدم کا مقصد خاص طور پر ایرانیوں کو انٹرنیٹ فراہم کرنا تھا، لیکن یہ معلوم ہے کہ تہران کو وسیع پابندیوں کا سامنا ہے۔

جبکہ ٹوئٹر پر بہت سے لوگوں نے امریکی ارب پتی سے سیٹلائٹ کے ذریعے انٹرنیٹ سروسز کے لیے اسٹیشن فراہم کرنے کا کہا۔

SpaceX کا مقصد دنیا بھر میں Starlink نیٹ ورک کو تیزی سے پھیلانا ہے، تاکہ OneWeb سمیت سیٹلائٹ کمیونیکیشن کمپنیوں سے مقابلہ کیا جا سکے۔

سخت پابندیاں

قابل ذکر ہے کہ ایران میں سوشل میڈیا تک رسائی پر برسوں سے سخت پابندیاں عائد ہیں اور حکام احتجاجی مظاہروں کے دوران عام طور پر بہت سے علاقوں میں انٹرنیٹ منقطع کر دیتے ہیں تاکہ اسے محدود کیا جا سکے اور اسے وسیع نہ کیا جا سکے۔

کل پیر کو انٹرنیٹ مانیٹرنگ گروپ NetBlocks نے کرد علاقے کے دارالحکومت میں انٹرنیٹ تک رسائی میں تعطل کی اطلاع دی۔ یہ تعطل حکومت کی طرف سے مقامی آبادی کے احتجاج کے بعد کیا گیا تھا۔

یہ احتجاج اس وقت شروع ہوا جب بائیس سالہ لڑکی مہاسا امینی کو پولیس نے نا مناسب لباس پہننے کے الزام میں گرفتار کیا اور اسے مبینہ طور پر تشدد کا نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں اس کی موقت واقع ہوگئی۔

مقبول خبریں اہم خبریں