بحری سرحد کی حد بندی کے لیے لبنان کو ہوچسٹین کی تحریری تجویز موصول

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ہفتے کے روزلبنانی صدر میشل عون کو امریکی ثالث اموس ہوچسٹین کی طرف سے لبنان اور اسرائیل کے درمیان سمندری سرحد کی حد بندی کے لیے ایک تحریری تجویز موصول ہوئی ہے۔یہ تجویز لبنان میں امریکی سفیر ڈوروتھی شیا نے انہیں پہنچائی۔

امریکی سفیر نے لبنان میں نگراں وزیراعظم نجیب میقاتی سے بھی ملاقات کی اور انہیں ہوچسٹین کی تجویز کی ایک کاپی دی۔ ایک کاپی پارلیمنٹ کے سپیکر نبیہ بری کو بھی پہنچائی گئی۔

لبنانی ایوان صدر نے اپنے ’ٹویٹر‘ اکاؤنٹ پر کہا کہ عون نے "لبنان میں امریکی سفیر ڈوروتھی شیا کے ہاتھوں سمندری حدود سے متعلق تجویز موصول کی ہے۔ یہ تحریری پیغام لبنان اور اسرائیل کے درمیان سمندری حدود کے حوالے سے ثالثی کرنے والے امریکی عہدیدار ہوچسٹین کی طرف سے پہنچائی گئی ہے۔

لبنان کے ایک سرکاری ذریعے نے معاصر عزیز الشرق کو بتایا کہ امریکی تجویز میں "نمبروں اور نقاط سے بھرے دس صفحات شامل ہیں اور اس میں نقشے شامل نہیں ہیں، بلکہ مقامات کا تعین کرنے کے لیے نشانات اور نکات شامل ہیں۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ عون اور پارلیمنٹ کے اسپیکر نبیہ بری اور میقاتی کے درمیان تجویز پر تبادلہ خیال کرنے کے لیے ایک میٹنگ منعقد کی جائے گی تاہم اس اجلاس کی تاریخ کے بارے میں کسی قسم کی کوئی بات نہیں کی گئی۔

سرکاری ذریعے نے بتایا کہ تکنیکی اور عسکری پہلو کے علاوہ جس پر تفصیلی بات چیت کی ضرورت ہے، لبنانیوں کو معاہدے کی وضاحت کرنے سے متعلق ایک سیاسی پہلو بھی پیش کیا گیا ہے۔

ذریعے نے نشاندہی کی کہ امریکی فریق نے "معاہدے کی تکمیل جلد مکمل کرنے کے لیے فوری ردعمل کی درخواست کی ہے۔

مکتوب کے مواد کے بارے میں پوچھے گئے سوال کے جواب میں ایوان صدر کے ایک ذریعے نے’اے ایف پی‘ کو بتایا کہ اس میں مذاکرات کی پیشکش شامل ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں