ریاض میں پہلی بار ویٹرنری ادویات اور پالتو جانوروں کی نمائش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

آج اتوار کو سعودی عرب کے دارالحکومت ریاض میں ویٹرنری ادویات اور پالتو جانوروں کے لیے اپنی نوعیت کی پہلی نمائش کا اہتمام کیا گیا ہے۔ یہ نمائش 2 سے 4 اکتوبر کے درمیان ریاض انٹرنیشنل کنونشن اینڈ ایگزیبیشن سینٹر میں وزارت ماحولیات، پانی اور زراعت کے زیراہتمام منعقد کی جا رہی ہے۔ اس نمائش میں پلانٹ پیسٹس اینڈ اینیمل ڈیزیزز کی روک تھام کے قومی مرکز (وقاء سینٹر) کے عہدیدار شرکت کریں گے۔ یہ نمائش بین الاقوامی نمائشوں اور کانفرنسوں کے انعقاد کے لیے کام کرنے والی سٹی ایونٹس کمپنی کے تعاون سے منعقد کی جا رہی ہے۔

سٹی ایونٹس کے ’سی ای او‘ عمار الزعیتر نےزور دے کر کہا کہ "سعودی عرب میں پہلی بار اس نمائش کے انعقاد کا مقصد پالتو جانوروں کی سپلائیز اور ان کی ویٹرنری ادویات کے لیے سرمایہ کاری کے نئے راستے کھولنا ہے۔ اس کہ مطالعات سے معلوم ہوا ہے کہ پالتو جانوروں کی اشیائے خوردونوش، ادویات اور لوازمات کی مقامی مارکیٹ محدود ہے۔ اس لیے یہ ضروری ہے ہے کہ بین الاقوامی کمپنیوں کو سعودی سرمایہ کاری کے بارے میں آگاہ کرنے کے لیے لایا جائے اور اس سے متعلق کاروبار کے لیے نئے چینل کھولے جائیں۔

اس نمائش کا مقصد ویٹرنری میڈیسن اور پالتو جانوروں کے شعبے میں مقامی اور بین الاقوامی تجربات کے تبادلے کے لیے ایک سالانہ پلیٹ فارم شروع کرنا ہے۔ اس کے علاوہ کمیونٹی میں پالتو جانوروں کی پرورش کی اہمیت کو اجاگر کرنا اور رضاکارانہ کام کے اس کے کلچر کو فعال کرنا۔ اس میں سرمایہ کاری کے فوائد سامنے لانا ہے۔ چونکہ مارکیٹ میں اس کا حجم سالانہ دو ارب ریال تک پہنچ جاتا ہے۔ ان میں سے 500 ملین ریال 19 سے زائد ممالک سے پالتو جانوروں کی درآمد کی مالیت کا حصہ ہےاور 1.3 ارب ریال ان جانوروں کے لیے سامان درآمد کرنے کی مالیت ہیں۔

نمائش کا انعقاد کرنے والی کمپنی نےکہا کہ 100 سے زائد نمائش کنندگان کی شرکت متوقع ہے، جن میں 40 مقامی نمائش کنندگان اور 60 بین الاقوامی نمائش کنندگان شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں