ولی عہد کا ’ڈاؤن ٹاؤن‘ منصوبہ ملک کی ترقی میں اہم سنگ میل ثابت ہوگا:السدیس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

صدارت عامہ برائےامور حرمین شریفین جنرل صدر ڈاکٹر عبدالرحمٰن السدیس نے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان اور پبلک انویسٹمنٹ فنڈ کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے چیئرمین کی طرف سے سعودی عرب میں ’ڈاؤن ٹاؤن‘ منصوبے کے لیے باقاعدہ کمپنی کے اجرا کی تحسین کی ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ ’ڈاؤن ٹاؤن‘ کمپنی سعود عرب کے شہروں کے بنیادی ڈھانچے کی ترقی میں اہم کردار ادا کرے گی اور نجی شعبے اور سرمایہ کاروں کے ساتھ اسٹریٹجک شراکت داری کو مضبوط کرے گی۔

السدیس نے کہا کہ ولی عہد اس مبارک ملک میں ترقی کو فروغ دینے کے خواہاں ہیں۔ انہوں نے مملکت میں شہری مراکز اور متعدد اور متنوع مقامات کے قیام اور ترقی کے علاوہ مملکت کے تمام خطوں میں معیار زندگی کو بہتر بنانے، اقتصادی ترقی کے حصول اور مملکت کے وژن 2030 کے اہداف اور خواہشات کے حصول کے لیے موثر اقدامات کیے ہیں۔

خیال رہے کہ سعودی عرب کے ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے پیر کے روز سعودی ڈاؤن ٹاؤن کمپنی (داون تاون السعودية)کی نقاب کشائی کی ہے۔یہ نئی کمپنی بھی مملکت کے خودمختار دولت فنڈ( پی آئی ایف) کی ملکیتی ہے۔

سعودی ڈاؤن ٹاؤن کمپنی (ایس ڈی سی) کا مقصد سعودی عرب بھرکے 12 شہروں میں شہری علاقوں اور مخلوط استعمال کے مقامات کے تعمیروترقی کے منصوبوں پرعمل درآمد کرنا ہے۔

ان 12 شہروں میں مدینہ منورہ، الخُبر، الاحساء، بریدہ، نجران، جیزان،حائل، الباحہ،عرعر، طائف، دومۃ الجندل اور تبوک شامل ہیں۔ایس ڈی سی تمام منصوبوں میں ایک کروڑمربع میٹرسے زیادہ اراضی تیار کرے گی ۔یہ سعودی عرب کی متنوع مقامی ثقافت اور روایتی فنِ تعمیر کے نمونوں سے جدید مقامات تیار کرے گی جبکہ ہر منصوبے میں جدید ٹیکنالوجی کا استعمال کیا جائے گا۔

کمپنی مذکورہ شہروں میں بنیادی ڈھانچے کو بہتر بنانے کے لیے نجی شعبے اور سرمایہ کاروں کے ساتھ تزویراتی شراکت داری قائم کرنے کا ارادہ رکھتی ہے۔اس کے تحت سیاحت، تفریح اور ہاؤسنگ سمیت اہم اقتصادی شعبوں میں کاروبار اور سرمایہ کاری کے نئے مواقع پیدا کیے جائیں گے۔

ایس ڈی سی کے آغاز سے پی آئی ایف کا مقصد مملکت سعودی عرب کے مختلف شہروں میں تجارت اور سرمایہ کاری کے مواقع میں اضافہ کرنا بھی ہے تاکہ ان کی کشش میں اضافہ ہو اور ان کے مقامی معیشتوں میں مثبت اثرات مرتب ہوں۔

ان شہروں میں نئے ترقیاتی منصوبے نجی شعبے اور مقامی شہریوں کے لیے روزگار کے نئے مواقع پیدا کرنے کے ساتھ ساتھ کاروباری افراد اور کمپنیوں کو اپنے کاروبار شروع کرنے اور وسعت دینے میں مدد دیں گے اورعلم اور مہارت کو مقامی بنانے میں بھی معاون ثابت ہوں گے۔

سعودی پریس ایجنسی کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ’’ایس ڈی سی کا آغاز سعودی عرب کے مختلف علاقوں میں ترقیاتی منصوبوں کے لیے ولی عہد کے ویژن کی عکاسی کرتا ہے۔اس میں قومی معیشت کی معاونت میں مقامی شہروں کے فعال کردار کواجاگرکیا گیا ہے‘‘۔

کمپنی کی حکمت عملی پی آئی ایف کی مقامی سطح پر مختلف شعبوں میں ترقی کے امکانات سے استفادے اورانھیں فعال کرنے کی کوششوں کے ساتھ مطابقت رکھتی ہے۔یہ سعودی ویژن 2030 کے مقاصد کے مطابق معیشت کو متنوع بنانے اور غیرتیل جی ڈی پی نمو میں کردارمیں مددگار ثابت ہوسکتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں