عالمی برادری ایران کی خلاف ورزیوں کو لگام ڈالے: سعودی عرب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی کابینہ نے ایرانی خلاف ورزیوں کے خلاف عالمی برادری کےٹھوس موقف کی ضرورت پر زور دیا ہے۔ گذشتہ روز ہونے والے کابینہ کے اجلاس میں کہا گیا ہے کہ ایران کھلے عام بین الاقوامی قوانین، چارٹر اور اصولوں کی خلاف ورزی کر رہا ہے۔ عالمی برادری کو اس کا نوٹس لینا چاہیے۔

سعودی عرب کی سرکاری پریس ایجنسی ’ایس پی اے‘ کی رپورٹ کے مطابق وزرا کونسل نے "عراق کی سلامتی اور استحکام کو خطرہ بنانے والے تمام حملوں" کو مکمل طور پر مسترد کرنے کا اعادہ کیا۔

خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود کی زیر صدارت ہونے والے کابینہ کے اجلاس میں اشارہ دیا گیا کہ مالی سال 2023 کے لیے ریاست کے عمومی بجٹ کا مقصد مملکت کی مالیاتی پوزیشن کو مضبوط اور مستحکم کرنا، اقتصادیات کی مثبت بلند شرحوں کو برقرار رکھنا۔ ترقی اور وژن 2030 کے منصوبوں و پروگراموں کو نافذ کرنا ہے۔

جمعہ کو سعودی وزارت خزانہ نے اعلان کیا تھا کہ اسے توقع ہے کہ سال 2023 کے لیے کل عوامی اخراجات تقریباً 1.114 کھرب ریال ہوں گے، جب کہ کل محصولات تخمینہ تقریباً 1.123 ٹریلین ریال لگایا گیا ہے۔

2023 کے بجٹ کے ابتدائی بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ اندازہ لگایا گیا ہے کہ 2023 کا بجٹ تقریباً نو ارب ریال کا فاضل حاصل کرے گا، جو مجموعی گھریلو پیداوار کے 0.2 فیصد کی نمائندگی کرتا ہے۔

کونسل نے سعودی حکومت اور برطانیہ کی حکومت کے درمیان توانائی کے شعبے میں تعاون کی یادداشت کی بھی منظوری دی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں