یوکرین کشیدگی میں کمی لانے کیلئے ہر طرح کی مدد کو تیار ہیں: امارات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات نے یوکرین بحران کا پرامن حل تلاش کرنے کی کوششوں میں اپنی ہر طرح کی مدد فراہم کرنے سے متعلق دیرینہ موقف کا اعادہ کیا ہے۔

امارات کی وزارت خارجہ کی جانب سے پیر کے روز جاری بیان میں کہا گیا کہ یو اے ای مسئلہ کے حل کیلئے سفارت کاری، مذاکرات اور بین الاقوامی قانون کے اصولوں کی پاسداری کی حمایت کرتا ہے۔

خارجہ امور اور عالمی تعاون کے امور کی وزارت نے مزید کہا کہ متحدہ عرب امارات کے صدر شیخ محمد بن زاید آل نہیان کا منگل کو روس کا دورہ بھی سلامتی کے حصول کیلئے امارات کی مسلسل کوششوں کے فریم ورک کے تحت ہی کیا جا رہا ہے۔ اس دورے میں وہ خطے اور پوری دنیا میں استحکام کے حوالے سے بات چیت کریں گے۔

سیاسی حل

امارات نیوز ایجنسی [وام] نے سرکاری بیان کے حوالے سے بتایا ہے کہ اس دورے کا مقصد علاقائی اور بین الاقوامی طاقتوں کے ساتھ نتیجہ خیز اور تعمیری تعاون کو بڑھانا اور یوکرین کے بحران سے متعلق تمام فریقوں کے ساتھ بات چیت کرنا ہے تاکہ اس بات چیت سے مؤثر سیاسی حل تک پہنچنے میں مدد مل سکے۔

وزارت نے مزید کہا کہ دو طرفہ مذاکرات ہی یوکرین بحران سے متعلق بڑھتی ہوئی فوجی کشیدگی میں کمی لا سکتے۔ مذاکرات کے ذریعے سے ہی انسانی نقصان میں کمی لائی جا سکتی۔ امارات عالمی امن اور سلامتی کے حصول کیلئے سیاسی تصفیہ تک پہنچنے کی کوشش میں مثبت کردار ادا کرتا رہے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں