’’عالمی برادری حوثیوں کو دہشت گرد گروپ قرار دینے پر غور کرے‘‘

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اقوام متحدہ میں سعودی نمائندے نے کہا ہے کہ عالمی برادری حوثی کو دہشت گرد گروپ قرار دینے پر نظر ثانی کرے۔

سفیر ڈاکٹر عبدالعزیز بن محمد الواصل نے جمعرات کے روز اشارہ دیا کہ حوثی ملیشیا نے جنگ بندی میں رکاوٹ ڈالی اور یمنی شہروں کا محاصرہ جاری رکھا ہوا ہے۔

دریں اثنا اقوام متحدہ میں متحدہ عرب امارات کے نمائندے نے یمن میں سعودی عرب کے کردار اور جنگ بندی میں توسیع پر صدارتی کونسل کے کردار کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ سلامتی کونسل پر واضح ہو گیا ہے کہ حوثیوں کو یمنیوں کے مصائب کی کوئی پرواہ نہیں ہے۔

بڑے خطرات

یہ بیانات یمن کے لیے اقوام متحدہ کے ایلچی ہانس گرنڈ برگ کے ملک میں جنگ بندی کی تجدید نہ کرنے پر اظہار افسوس کے بعد گذشتہ روز سامنے آئے ہیں۔ انہوں نے کہا تھا کہ جنگ بندی کی تجدید نہ ہونے سے بڑے خطرات پیدا ہوں گے۔

یمن کے لیے اقوام متحدہ کے ایلچی ہانس گرنڈ برگ: رائیٹرز
یمن کے لیے اقوام متحدہ کے ایلچی ہانس گرنڈ برگ: رائیٹرز

قبل ازیں سلامتی کونسل نے یمن کے متعلق اپنا ماہانہ اجلاس منعقد کیا جس میں ملک کی سیاسی، عسکری اور انسانی صورت حال کی تازہ ترین پیش رفت پر بات چیت کی گئی۔ یاد رہے جنگ بندی کی میعاد 2 اکتوبر کو ختم ہو گئی ہے اور بین الاقوامی کوششیں جنگ بندی میں توسیع کرنے میں ناکام ہو گئیں ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں