سعودی عرب: ریزروزمیں غیرقانونی شکارکے الزام میں قانون کی خلاف ورزی پر26 افراد گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کے ماحولیاتی سلامتی کی اسپیشل فورسز نے ماحولیاتی تحفظ کے نظام کی خلاف ورزی پر26 شہریوں کو گرفتار کیا ہے۔ یہ گرفتاریاں شاہ سلمان رائل ریزرو اور شہزادہ محمد بن سلمان کے رائل ریزرو میں ممنوعہ مقامات میں داخل ہونے اور شکار کرنے کے الزام میں کی گئیں۔ پولیس نے ملزمان سے تین بندوقیں،دو پستول،ہوائی فائر کرنے والی 10 بندوقیں،1453 گولیاں، شکار کے پانچ جال، شکار کیےگئے38) پرندے اور دیگر سامان شامل ہے۔

ماحولیاتی سلامتی کے لیے اسپیشل فورسز کے ترجمان کرنل عبد الرحمن العتیبی نے کہا بغیر اجازت کے محفوظ قدرتی مقامات میں داخل ہونے اور وہاں پر شکار کرنے پر جرمانہ عاید کیا جاتا ہے۔ بغیر اجازت کے ریزرومیں داخلے پرپانچ ہزار ریال جرمانہ، وہاں شکار کرنے پرپانچ ہزار ریال جرمانہ، بغیر اجازت کے جال یا بندوق سے شکار کے لیے ممنوعہ پرندے کےشکار پر ایک لاکھ ریال اور شکار کے لیے آتشیں ہتھیاروں کے استعمال پر 80 ہزار ریال جرمانہ کیا جاتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا شکار پرجرمانے کا فیصلہ مجاز اتھارٹی کرتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں