سعودی عرب میں حرہ ’’البرک‘‘ لاکھوں سال قدیم آتش فشائی گڑھا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

حرۃ ’’ البرک‘‘ سعودی عرب کے جنوب میں واقع آتش فشائی گڑھوں میں سے ایک وسیع گڑھا ہے۔ اس ’’حرۃ‘‘ کے اطراف اس سے ملتے جلتے بہت سے پہاڑ پھیلے ہوئے ہیں۔ یہ حرات سعودی عرب کے مختلف خطوں کی لاکھوں سال قدیم ارضیاتی تاریخ کی گواہی دے رہے ہیں۔

آتش فشاں سے بنے گڑھے اور نکلنے والے مادے پر مشتمل علاقے کو حرۃ بھی کہتے ہیں۔ ایسے حرّات سعودی عرب کی ارضیاتی تاریخ کی سب سے نمایاں خصوصیات میں سے ایک ہیں۔ یہ حرّات جنوب میں یمن سے لے کر شمال میں شام تک مملکت کے مغربی اور جنوبی علاقوں میں پھیلے ہوئے ہیں ۔ ان میں سے کچھ دوسرے علاقوں میں بھی پائے جاتے ہیں۔

مخصوص اداروں کی جانب سے شائع رپورٹس کے مطابق ان ’’حرّات‘‘ میں آتش فشائی مواد موجود ہے اور یہ مادہ قریبا 30 ملین سال قبل زمین سے نکلا تھا۔

سعودی عرب میں موجود آتش فشائی حرات میں الرحا، ثنان، خیبر، کشب، لونیر، رھاط، عویرض، یار، الحطیمہ، الدخنہ، دلھم، جبل سلمی، سمراء الصفراء، قمع شرمہ، طابہ اور البرک شامل ہیں۔ حرہ ’’البرک‘‘ سطح سمندر سے 300 میٹر بلند ہیں اور عسیر کے علاقے میں بحیرہ احمر کے ساحل کے قریب ہے۔ سعودی عرب میں مختلف علاقوں میں حرات کے مجموعے موجود ہیں۔ یہ حرات سعودی عرب کی سرزمین کا 4.6 فیصد علاقہ گھیرے ہوئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں