وزارت حج و عمرہ کا عمرہ ویزا کی مدت پر عمل کرنے کی ضرورت پر زور

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

کل ہفتے کے روز سعودی عرب میں وزارت حج و عمرہ نے زور دے کر کہا ہے کہ مکہ معظمہ آنے والے زائرین کو عمرہ ویزہ میں بتائی گئی مدت پر عمل کرنا ہوگا، جو کہ 30 سے 90 دن کے درمیان ہے۔ عمرہ زائرین کو چاہیے کہ وہ ویزہ کی میعاد ختم ہونے سے پہلے ہی روانہ ہوجائیں گے۔

وزارت نے قبل ازیں متحدہ حکومت کے پلیٹ فارم "نسک" کے آغاز کا اعلان کیا تھا جو مکہ اور مدینہ منورہ کے زائرین کے لیے نیا سعودی پورٹل ہوگا، جس کا مقصد عازمین کے تجربے کو فروغ دینا اور عمرہ کی ادائیگی کے لیے ان کی آمد کے طریقہ کار کو آسان بنانا ہے۔ یہ سروس پوری دنیا میں، "ضیوف الرحمان سروس پروگرام" کے اقدامات اور سعودی وژن 2030 کے اہداف کا حصہ ہے۔

"نسک" کو سعودی ٹورازم اتھارٹی کے تعاون اور شراکت داری میں شروع کیا گیا تھا جہاں یہ "سعودی عرب کی روح" پر فراہم کی جانے والی خدمات سے منسلک ہے۔اس کا مقصد اللہ کے مہمانوں کے سفر کو بھرپور بنانا اور ریزرویشن اور رابطہ کاری کے طریقہ کار کو آسان بنانا ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ جانے والوں کے تجربے کو بہتر بنانے کے لیے مختلف پیکجز اور پروگرام فراہم کرنا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں