اپنی سلامتی اور استحکام کو نشانہ نہیں بننے دیں گے: ایرانی کمانڈر

عوام، حکومت اور ملک کی خاطر اپنے آپ کو قربان کر دیں گے: حسین سلامی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ایرانی پاسداران انقلاب کے کمانڈر حسین سلامی نے جمعرات کو تاکید کی ہے کہ کسی کو بھی عوام کی سلامتی اور استحکام کو نشانہ بنانے کی اجازت نہیں دی جانی چاہیے۔

سلامی نے ایرانی میڈیا کے ذریعے رپورٹ کیے گئے ریمارکس میں مزید کہا، "ہم عوام، حکومت اور ملک کی خاطر اپنے آپ کو قربان کر دیں گے۔"

ایران میں 16 ستمبر سے الگ الگ علاقوں میں احتجاج کیا جارہا ہے۔ احتجاج حجاب نہ کرنے پر کرد خاتون مہسا امینی کی گرفتاری کے بعد پولیس حراست میں موت کے بعد شروع کیا گیا تھا۔

اڑھائی ماہ سے زیادہ عرصہ سے جاری مظاہروں میں ایران انٹرنیشنل نے ایرانی پاسداران انقلاب کے کمانڈر انچیف کے لیے سرکاری ایرانی نیوز ایجنسی فارس کی طرف سے تیار کردہ ایک خفیہ بلیٹن حاصل کر لیا جس میں اس نے سپریم لیڈر علی خامنہ ای کا حوالہ دیتے ہوئے کہا تھا کہ مظاہرے کسی بھی صورت میں جلد ختم نہیں ہونگے۔

یہ خفیہ خبر نامہ ہیکر گروپ ’’بلیک ریوارڈ‘‘ نے ہیک کیا تھا جسے ایران انٹرنیشنل نے حاصل کر لیا تھا۔ اس لیک ہونے والی معلومات سے آگاہی ملی ہے کہ ایرانی حکومت عوامی احتجاج کے سامنے کمزور ہو رہی ہے۔ خفیہ رپورٹ کا اہم لفظ "مظاہرے نہیں رکیں گے" ہے۔

لیک ہونے والی 123 صفحات کی دستاویز میں بتایا گیا ہے کہ ایرانی حکومت میڈیا جنگ میں پیچھے رہ گئی ہے۔ دستاویز میں یہ بھی تجویز دی گئی ہے کہ کچھ ایسا کیا جائے کہ شہریوں کو یقین ہوجائے کہ احتجاج غیر ملکیوں کا کام ہے۔

دستاویز سے یہ بھی پتہ چلتا ہے کہ باسیج کو بھی نقصان ہوا ہے اور وہ عوامی احتجاج کو روکنے کیلئے متحرک ہونے سے قاصر ہو کر رہ گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں