امارات میں کمپنیوں کی ایک لاکھ ڈالر سے زائد آمدنی پر 9 فیصد کارپوریٹ ٹیکس نافذ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

متحدہ عرب امارات نے ایک لاکھ ڈالر سے زیادہ کمانے والی کمپنیوں پر فیصد کارپوریٹ ٹیکس عائد کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ امارات میں اس سلسلے میں ایک قانون کے نفاذ کا حکم جاری کیا گیا ہے۔ جس میں کہا گیا ہے ایسی کاروباری کمپنیوں کو 9 فیصد کارپوریٹ ٹیکس دینا ہو گا جن کی آمدنی ایک لاکھ ڈالر یا 375000 لاکھ اماراتی درہم سے زیادہ ہو گی۔

اس ٹیکس کے اطلاق یکم جون 2023 سے ہو گا۔ اماراتی وزارت خزانہ نے بھی اس نئے ٹیکس کے اعلان کی تصدیق کر دی ہے۔ اس اقدام کو ملکی معیشت اور قوانین کے حوالے سے اہم سنگ میل قرار دیا گیا ہے۔

اس کے ننتیجے میں ایک مضبوط ٹیکس رجیم ممکن ہو سکے گی نیز امارات عالمی سطح پر اپنے اہداف کا حصول ممکن بنا سکے گا۔

وزارت خزانہ کے مطابق یہ کارپورٹ ٹیکس دنیا میں جاری زیر عمل بہترین ٹیکس سسٹم کے مطابق اختیار کیا گیا ہے۔ تاہم ملک میں قدرتی وسائل نکالنے سے متعلق کمپنیوں کو اس ٹیکس سے چھوٹ ہو گی۔

نیز حکومتی ادارے، پنشن فنڈ، انویسٹمنٹ فنڈ اور عوامی بہبود کے ادارے کاپوریٹ ٹیکس سے مستثنیٰ ہوں گے۔ کارپوریٹ ٹیکس تنخواہوں سے ہونے والی آمدنی پر بھی لاگو نہیں ہو گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں