اسرائیلی پولیس نے صبح سویرے فائرنگ کر کے فلسطینی شہری کو گھر کے دروازے پر گولی ماردی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی قابض پولیس نے جمعہ کے روز صبحے سویرے ایک عرب فلسطینی کو فائرنگ سے شہید کر دیا ہے۔ اسرائیلی پولیس کا دعویٰ ہے فلسطینی نے انہیں بلا کر ان پر گاڑی سے حملہ کیا تھا۔ جس پر اسے موقع پر ہی گولیوں کا نشانہ بنا دیا گیا۔

اسرائیلی پولیس کے مطابق اس شخص نے کفر قاسم کے علاقے سے پولیس کو ایک جھوٹے واقعے کی بنیاد پر فون کر کے بلایا تھا، تاکہ جب پولیس پہنچے تو اس پر حملہ کر سکے۔ کفر قاسم کا علاقہ تل ابیب سے 12 کلو میٹر کے فاصلے پر ہے۔

پولیس اہلکار جب اس کے دروازے پر پہنچے تو اس نے پولیس والوں پر حملہ کرنے کی غرض سے اپنی گاڑی پر بیٹھا۔ پولیس کے دعوے کے مطابق وہ گاڑی پولیس اہلکاروں سے ٹکرانا چاہتا تھا۔ اسلیے اسے فوری فائرنگ کا نشانہ بنا دیا گیا۔

واضح رہے سی سی ٹی کی فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ اسرائیلی پولیس اس فلسطینی کے گھر کے دروازے تک پہنچی ہے۔ ایک شہری اس کے بعد گھر سے نکلا ہے جس پر فائرنگ کر دی گئی۔

کم از کم اس سی سی ٹی فوٹیج سے واضح نہیں ہوتا ہے کہ فلسطینی نے کس طرح اسرائیلی پولیس اہلکاروں کو کب نشانہ بنانے کی کوشش کی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں