سعودی معیشت

سعودی عرب: 11 ماہ میں غیر ملکیوں کی ترسیلات زر133 ارب ریال رہیں،6.7 فیصد کمی

اکتوبر میں ڈھائی سال کی کم ترین ترسیلات زر ریکارڈ کی گئیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی سینٹرل بینک کے اعداد و شمار کے مطابق غیر ملکیوں نے 2022 کے پہلے 11 ماہ میں 133.1 بلین ریال کی سعودیہ منتقلی کی جو گزشتہ سال 2021 کے اسی عرصے کے مقابلے میں 9.6 بلین ریال یا 6.7 فیصد کی کمی ہے۔ گزشتہ سال کے اسی عرصہ میں 142.8 بلین ریال منتقل کئے گئے تھے۔

گزشتہ نومبر کے دوران غیر ملکی منتقلیوں کی رقم 10.5 بلین ریال تھی جو گزشتہ سال نومبر 2021 کے دوران ان کی منتقلی کے مقابلے میں 2447 ملین ریال یا 18.9 فیصد کی کمی ہے۔ نومبر 2021 میں 12.97 بلین ریال منتقل کئے گئے تھے۔

اس اکتوبر کے مہینے میں غیر ملکیوں کی ترسیلات زر میں 6.4 فیصد کمی واقع ہوئی اور یہ رقم 11.2 بلین ریال رہیں ۔ یہ خاص طور پر اپریل 2020 کے بعد سے ڈھائی سال کی کم ترین سطح تھی ۔

اخبار ’’ کیپٹل‘‘ کے مطابق سعودیوں کی جانب سے نومبر 2022 کے دوران 6.3 بلین ریال منتقل کئے گئے۔ نومبر 2021 میں یہ رقم 7.2 بلین ریال تھی۔ اس طرح اس ماہ میں سعودیوں کی جانب سے منتقلی میں 11.8 فیصد کمی دیکھی گئی ۔ تاہم نومبر میں اکتوبر 2022 کے مقابلے میں 6.6 فیصد اضافہ ہوا۔ اکتوبر میں 5.9 بلین ریال کی ترسیلات زر ریکارڈ کی گئی تھیں۔

سنٹرل بینک کے نومبر 2022 کے بلیٹن کے مطابق مقامی بینکوں نے نومبر کے دوران تقریباً 63.5 بلین ریال فروخت کیے جنہیں مملکت کے اندر دیگر صارفین کے لیے زرمبادلہ میں تبدیل کیا گیا۔ یہ رقم اکتوبر کی فروخت کے مقابلے میں 7.2 بلین ریال زیادہ ہے۔ اکتوبر 2022 میں یہ رقم تقریباً 56.3 بلین ریال تھی۔ تاہم اس میں نومبر 2021 میں غیر ملکی کرنسی کی فروخت کے مقابلے میں تقریباً 32.7 بلین یا 34 فیصد کی کمی واقع ہوئی۔ نومبر 2021 میں یہ رقیم 96.2 بلین ریال تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں