شامی عالم دین علامہ راتب النابلسی کی سوشل میڈیا پراپنی وفات کی افواہوں کی تردید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

شام کے ایک سرکردہ عالم دین 85 سالہ محمد راتب النابلسی نے سوشل میڈیا پراپنی وفات کی افواہوں کو مسترد کرتےہوئے کہا ہے کہ وہ زندہ ہیں اور ان کی وفات کی خبریں من گھڑت ہیں۔

شامی عالم دین نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ’فیس بک‘ پر علامہ محمد راتب النابلسی کے آفیشل پیج نے ان کی موت کے بارے میں گردش کرنے والی افواہوں کی تردید کرتے ہوئے اس بات پر زور دیا کہ ان کی موت کی خبریں بے بنیاد افواہیں ہیں۔

مشہور مذہبی رہ نما خود بھی اپنے پیروکاروں کو اپنی صحت کے بارے میں ذاتی حیثیت میں یقین دلاتے ہوئے نظر آئے۔انہوں نے اپنے آفیشل پیج پر ایک ویڈیو کلپ پوسٹ کیا، جس میں وہ یہ کہتے ہوئے دیکھے جا سکتے ہیں کہ"میں ٹھیک اور صحت مند ہوں"۔

کچھ روز قبل سوشل میڈیا پرعلامہ راتب النابلسی کی الجزائر میں وفات کی خبریں گردش کررہی تھیں جس کے بعد خود ڈاکٹر محمد رتیب النابلسی کو اپنے زندہ ہونے کی یقین دہانی کرانا پڑی۔

مقبول خبریں اہم خبریں