ترکیہ زلزلہ

سعودی امدادی ٹیم نے زلزلہ سے متاثرہ غازی عنتاب میں کام شروع کر دیا

تیسرا سعودی امدادی طیارہ 104 ٹن امداد لے کر ترکی کے اڈانا ایئرپورٹ چلا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

آج جمعہ کو ’’العربیہ‘‘ کے نمائندے نے تصدیق کی ہے کہ سعودی امدادی ٹیم نے ترکیہ کے شہر غازی عنتاب میں کام شروع کردیا ہے۔ یہ شہر زلزلہ سے شدید متاثر ہوا تھا۔ ’’العربیہ‘‘ کے مندوب نے مزید کہا کہ غازی عنتاب میں ملبے کے نیچے سے اب بھی آوازیں سنائی دے رہی ہیں۔ دریں اثنا تیسرا سعودی امدادی طیارہ 104 ٹن امداد لے کر اڈانا کے ترکی کے ہوائی اڈے کی طرف چلا گیا ہے۔
جمعرات کو کنگ سلمان ریلیف سینٹر نے اعلان کیا تھا کہ زلزلے سے متاثر ہونے والوں کے لیے شروع کی گئی مہم ’’ ساھم‘‘ کو مقبولیت ملی ہے اور اس مہم کے تحت 145 ملین ریال سے زیادہ رقم جمع کرلی گئی ہے۔ مرکز نے بتایا کہ اس کی ٹیمیں رکاوٹوں کے باوجود متاثرہ افراد تک امداد پہنچانے کے لیے پرعزم ہیں۔


مرکز نے واضح کیا کہ سعودی انسانی ہمدردی کی بنیاد پر امداد کو ضرورت مندوں تک پہنچائے گا جہاں وہ ہوں گے۔ شام اور ترکہ میں آنے والے زلزلے سے متاثرہ افراد کی امداد کے لیے سعودی عرب کی مقبول مہم "ساھم" نے بدھ کو 80 ملین رالہ جمع کر کے دونوں ملکوں کی جانب سعودی فضائی پل کا آغاز بھی کر دیا تھا۔
واضح رہے خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود اور سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے پیر کو آنے والے تباہ کن زلزلے کے بعد ترکیہ اور شام دونوں کو امداد فراہم کرنے کی ہدایت کردی تھی۔ جمعہ 10 فروری کی دوپہر تک اس سلسلہ میں جاں بحق ہونے والے افراد کی تعداد 22300 سے زیادہ ہوگئی ہے۔

Advertisement
مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں