سعودی عرب: بغیر لائسنس میٹرولوجیکل سروسز فراہمی پر سخت سزا کا اعلان

مجرم کو 10 سال قید اور 20 لاکھ ریال جرمانہ تک کی سزا دی جائے گی: پبلک پراسیکیوشن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی پبلک پراسیکیوشن نے کہا ہے کہ خودمختار موسمیاتی خدمات کا تعلق قومی سلامتی سے ہے اور یہ ان خدمات کو فراہم کرنے کے مجاز اتھارٹی تک محدود ہیں۔

پبلک پراسیکیوشن آفس نے جمعرات کو اپنے آفیشل ٹویٹر اکاؤنٹ کے ذریعے بتایا کہ اس معاملے کی خلاف ورزی کرنے والی کسی بھی سرگرمی میں ملوث مجرم کو سخت سزا دی جائے گی۔ بغیر لائسنس موسمیاتی خدمات فراہم کرنے والے کو 10 سال قید اور 20 لاکھ ریال جرمانہ کی سزا دی جائے گی۔ یہ بڑے جرائم میں سے ایک جرم ہے اور اس جرم پر گرفتاری کر لی جائے گی۔

اس میں کہا گیا ہے کہ موسمیاتی نظام کو لاگو کرنے کے مقاصد کے لیے، درج ذیل اصطلاحات اور اصطلاحات کے وہ معنی ہوں گے جو ان میں سے ہر ایک کے متضاد ہیں:

اس حوالے سے درج ذیل اصطلاحات کے وہی معنی ہیں جو طے کئے گئے ہیں۔ اہم اصطلاحات کے معنی درج کئے جارہے ہیں

’’موسمیات‘‘ کی اصطلاح میں موسم، آب و ہوا، ماحولیات کو متاثر کرنے والے ماحولیاتی اور سمندری مظاہر کا مشاہدہ اور پیش گوئی کا عمل شامل ہے۔

’’خودمختار میٹرولوجیکل سروسز‘‘ سے مراد قومی سلامتی سے متعلق موسمیاتی سرگرمیاں اور معلوماتی مصنوعات شامل ہوں گی۔ خودمختار موسمیاتی خدمات کی کارکردگی قومی موسمیاتی مرکز تک محدود ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں