اریحا پناہ گزین کیمپ پر اسرائیلی فوج کےحملے میں دو فلسطینی شہید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

قابض اسرائیلی فوج نے فلسطین کے علاقے غرب اردن میں اریحا کے مقام پر واقع مہاجر کیمپ پر چھاپہ مار کارروائی کے دوران دو فلسطینی شہریوں کو گولیاں مار کرشہید کردیا۔

فلسطینی وزارت صحت نے بدھ کو بتایا کہ اسرائیلی فوج کی بھاری نفری نے اریحا میں عقبہ جار کیمپ پر چھاپے کے دوران اسرائیلی گولیاں مار کر دو فلسطینیوں کو شہید کیا۔ ایک فلسطینی کو شدید زخمی حالت میں گرفتار کیا گیا اور کچھ دیر بعد اسرائیلی فوج نے اس کی شہادت کا اعلان کردیا۔ زخمی ہونے کے بعد وہ کئی گھنٹے سڑک پرتڑپتا رہا مگر اسرائیلی قابض فوج نے سفاکیت کا مظاہرہ کرتے ہوئے زخمی کو طبی امداد فراہم کرنے اور اسے ایمبولینس کے ذریعے اسپتال منتقل کرنے کی اجازت نہیں دی۔

بدھ کواسرائیلی افواج نے اریحا میں عقبہ جبر کیمپ پر اچانک چھاپہ مارا۔ قابض فوج نے ایک مکان کو گھیرے میں لے لیا اور اس کے اندر موجود لوگوں سے باہر آنے کو کہا گیا۔

ادھر اسرائیلی وزیراعظم بنجمن نیتن یاہو نے کہا کہ ایک آباد کار کے قتل میں حصہ لینے والے 3 دہشت گردوں کو گرفتار کر لیا گیا۔

اسرائیلی فوج نے پیر کی شام ایک آباد کار کی ہلاکت کے جواب میں شمال مشرقی مغربی کنارے کے شہر اریحا اور اس کے دیہاتوں پر مسلسل تیسرے روز بھی اپنا سخت محاصرہ جاری رکھا۔

بدھ کو مقامی ذرائع نے اطلاع دی ہے کہ اسرائیلی افواج اریحا شہر تک رسائی یا اس سے باہر نکلنے میں رکاوٹیں کھڑی کی ہیں اور شہر میں کسی کو داخل ہونے یا باہر جانے سے روکا جا رہا ہے۔ تمام سڑکوں اور شہرکے داخلی اور خارجی راستوں کی سخت ناکہ بندی کی گئی ہے۔

اسرائیلی افواج نے شہر کے مشرق میں کراما کراسنگ کے قریب فوجی چوکیاں اور عقبہ جبر کیمپ کے قریب جنوبی داخلی راستے، شہر کے شمال میں دو دیگر چوکیوں کے علاوہ شہر اور اس کے دیہات کے ارد گرد دوسری ثانوی چوکیاں قائم کی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں