اردن: گھریلو ناچاقی پر بیٹے کی فائرنگ سے باپ قتل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

رواں ہفتے اردن میں کئی گھناؤنے خونی جرائم کے واقعات سامنے آئے۔ پبلک سیکیورٹی ڈائریکٹوریٹ نے ریکارڈ اوقات میں مجرموں کو گرفتار کیا، جن میں تازہ ترین زرقا گورنری میں ایک نوجوان کا قتل تھا۔

سکیورٹی کے میڈیا ترجمان کے مطابق پبلک سکیورٹی ڈائریکٹوریٹ کے لیےکرنل عامر السرطاوی کی بیان کردہ تفصیلات سے معلوم ہوا ہے کہ دارالحکومت عمان کے مشرق میں واقع زرقا شہر کے تجارتی مرکز میں ایک پچاس سالہ شخص کی لاش اس کے گھر کے اندر سے ملی، جہاں سے سکیورٹی فورسز نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر تلاشی کی کارروئی کی ہے۔

اردن کے سکیورٹی بیان میں کہا گیا ہے کہ لاش پر دو گولیاں لگیں، جس کے نتیجے میں موت واقع ہوئی۔ تفتیش کی پیروی کے لیے کرمنل انویسٹی گیشن ڈیپارٹمنٹ اور زرقا پولیس کی ایک تفتیشی ٹیم تشکیل دی گئی ہے۔

گھریلو ناچاقی

السرطاوی نے تصدیق کی کہ قتل کے حالات و واقعات اور جائے وقوعہ سے معلومات اکٹھا کرنے سے شبہ مقتول کے بیٹے پر پڑا، جسے گرفتار کیا گیا اور تفتیش میں اس نے اعتراف کیا کہ اس نے خاندانی تنازعات کے بعد اپنے والد کو گولی ماری۔ پولیس نے ملزم کا اسلحہ قبضے میں لے لیا گیا اور اسے عدالت میں پیش کیا جائے گا۔۔

قابل ذکر ہے کہ دل دہلا دینے والے خونی جرائم نے چند ہی دنوں میں اردن کو ہلا کر رکھ دیا۔ مختلف حالات میں چاقو مارنے کے 4 واقعات پیش آئے یہ تمام واقعات دارالحکومت عمان میں پیش آئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں