سعودی قومی پرچم کو بطور ٹریڈ مارک یا دیگر مقاصد کے لیے استعمال کرنا ممنوع قرار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کے پبلک پراسیکیوشن نے قومی پرچم کے استعمال کے حوالے سے ایک انتباہ جاری کیا ہے۔ یہ وارننگ ایک ایسے وقت میں جاری کی گئی ہے جب سعودی عرب کے شہری ہر سال گیارہ مارچ کو ’یوم پرچم‘ مناتے ہیں۔

پبلک پراسیکیوشن نے "ٹویٹر" پر ایک ٹویٹ میں اس بات کی تصدیق کی کہ قومی پرچم کو بطور ٹریڈ مارک، تجارتی تشہیر کے مقاصد کے لیے، یا اس نظام میں طے شدہ چیزوں کے علاوہ کسی اور مقصد کے لیے استعمال کرنا ممنوع ہے۔

ہر سال 11 مارچ کو سعودی عرب شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود کے حکم سے سعودی پرچم کا دن منائیں گے۔

تجزیہ کار یحییٰ التلیدی نے کہا کہ قومی پرچم کی قدر سعودی ریاست کی تاریخ میں 1139 میں قائم ہونے کے بعد سے 1727ء تک پھیلی ہوئی ہے، جو توحید کی گواہی کی علامت ہے۔ یہ علامت امن اور آشتی کا پیغام ہے۔ جس کی بنیاد یہ مبارک ریاست تھی۔یہ پرچم اس ملک کو متحد کرنے کی مہموں کا گواہ تھا جو سعودی ریاست کے قیام کے لیے چلائی گئی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں