رمضان المبارک: سعودی عرب میں معمول سے زیادہ گرمی اور بارشوں کا امکان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب میں موسمیات کے قومی مرکز نے رمضان کے مہینے میں سعودی عرب کے بیشتر علاقوں میں درجہ حرارت میں اضافے اور بارش معمول سے زیادہ ہونے کی توقع کا اظہار کیا ہے۔
ماہ مقدس کی موجودہ موسمی صورتحال پر رپورٹ کے مطابق پیش گوئیاں ظاہر کرتی ہیں کہ مارچ کے مہینے میں اوسط درجہ حرارت 1.5 ڈگری تک بڑھ جائے گا۔ خاص طور پر تبوک، الجوف اور شمالی سرحدی علاقوں کے کے کچھ حصوں میں گرمی معمول سے زیادہ ہوگی۔ بابرک مہینے کے پہلے ہفتے کے دوران خاص طور پر 23 سے 31 مارچ تک کے عرصے میں درجہ حرارت زیادہ رہنے کا امکان ہے۔ زیادہ تر علاقوں میں رمضان کے مہینے میں اوسط درجہ حرارت بڑھے گا۔
رمضان المبارک کے بقیہ حصے کے لیے موسم کی پیش گوئی کو دیکھیں تو یکم تا 20 اپریل کے اس عرصہ میں بھی سعودی عرب کے زیادہ تر علاقوں میں درجہ حرارت اوسط سے زیادہ ہونے کا امکان ہے۔ مدینہ منورہ، مکہ مکرمہ، عسیر اور جازان میں درجہ حرارت معمول کے مطابق رہنے کا امکان ہے۔
مرکز نے پیش گوئی کی ہے کہ سعودی عرب میں ماہ مقدس میں بارشیں بھی معمول سے زیادہ ہونے کا امکان ہے۔ خاص طور پر ریاض، حائل، القصیم، الجوف میں ، شمالی سرحدی علاقوں، مکہ مکرمہ، عسیر اور جازان کے علاقوں میں رمضان کے پہلے ہفتے میں بارش کا امکان ہے۔ ماہ کے بقیہ حصے کے لیے موسمیاتی پیش گوئی کے مطابق بارشیں تمام خطوں میں اوسط سے زیادہ ہیں ۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں