خراب موسم اور بارش کے دوران مسجد حرام میں تیاریاں بڑھا دی گئیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

صدارت عامہ برائے امورحرمین شریفین کی سروسز اینڈ انوائرنمنٹل پروٹیکشن اچیومنٹ ایجنسی نے مسجد الحرام میں بارش کے دوران اپنی تیاریاں بڑھا دی ہیں۔ موسم کی ہنگامی صورت حال کے پیش نظرایجنسی نے 200 سے زیادہ سپروائزرز اور نگران مقرر کیے۔ اس کے علاوہ بارش کے دوران مسجد حرام میں نمازیوں اور زائرین کی خدمت کے لیے 4000 سے زیادہ مردو خواتین رضاکاروں کی خدمات حاصل کی ہیں۔

جنرل پریذیڈنسی کے انڈر سیکرٹری برائے سروسز اینڈ انوائرمنٹل پروٹیکشن اچیومنٹ انجینیراحمد بن عمر بالعمش نے بتایا کہ مطاف، مسجد الحرام میں نمازکے لیےمختص ہالوں ، داخلی اور خارجی راستوں پر بارش سے پونا گھنٹہ قبل تمام ضروری انتظامات کرلیے گئے تھے۔ انہوں نے بتایا کہ بارش کے موسم کے پیش نظر صدارت عامہ نے مسجد الحرام میں اپنی تیاریاں بڑھا دی ہیں تاکہ نمازیوں اور عمرہ کے مناسک ادا کرنے والے زائرین کو سکون کے ساتھ عبادت کا موقع فراہم کیا جا سکے۔

مسجد الحرام کے صحن اور راستوں کو بارش کے پانی سے صاف اور خشک کرنے کے لیے تمام ضروری آلات فراہم کیے گئے ہیں۔ صحن مطاف، بیرونی مقامات اوربالائی منزلوں میں بارش کے پانی کو ہٹانے اور فرش کو خشک کرنے کے لیے تقریباً 500 زاید مشینین اور آلات مہیا کیے گئے ہیں۔

بالعمش نے اس بات پر زور دیا کہ ایجنسی ایسے معاملات کے لیے ہنگامی منصوبہ بندی کے ذریعے اپنی تیاریاں تیز کر رہی ہے۔ بارشوں کے پیش نظر احتیاطی منصوبہ بھی تیار کیا گیا ہے۔ اس ہنگامی منصوبے کے تحت رضا کاروں مناسب تعداد اور مسجد الحرام میں مخلتف جگہوں کی دیکھ بھال کے لیے ضروری آلات فراہم کیے گئے ہیں۔

بالعمش نے مزید کہا کہ بارش کی جیکٹس فراہم کی گئی ہیں اور کافی تعداد میں پلاسٹک واکرز کو مرکزی اور ثانوی داخلی راستوں اور ایسکلیٹرز کے داخلی راستوں پر پھیلائے گئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں