ٹریفک حادثہ میں جاں بحق سعودی خاندان کے رشتہ دار نے تفصیلات بتائیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

چند روز قبل ریاض روڈ پر وادی بن ھشبل پر ایک خوفناک کار حادثے میں 6 افراد پر مشتمل پورا سعودی خاندان جاں بحق ہوگیا تھا۔ مملکت کے جنوب مغرب میں جازان کے علاقے ’’ العارضہ‘‘ گورنری میں یحییٰ الخبرانی ، ان کی بیوی اور چار بچے جاں بحق ہوگئے تھے، الخبرانی ایک سکول ایجنٹ کے طور پر کام کرتا تھا۔ یحییٰ الخبرانی کی بیوی کے بھائی "سلمان الخبرانی" نے ’’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘‘ کو دیے گئے ایک انٹرویو میں وضاحت کی کہ خاندان کو گزشتہ جمعرات کو عسیر کے علاقے میں ایک خوفناک حادثہ پیش آیا جب وہ ریاض سے جازان کے سفر سے واپس آرہے تھے۔

وہ چھٹی گزار کر تیسرے سمسٹر کی تیاری کے لیے واپس آ رہے تھے۔ اور انہوں نے بتایا کہ حادثہ ریاض روڈ پر وادی بن ھبشل پر پیش آیا۔ ٹرک ان کی گاڑی کے ساتھ ٹکرا گیا۔ نتیجہ میں یحییٰ، ان کی اہلیہ فاطمہ، ان کے بیٹے محمد، نجوا، حسن اور خالد جاں بحق ہوگئے۔ انہوں نے کہا یہ حادثہ خاندان کے لیے ایک سانحہ تھا ہم صبر کر رہے اور خود کو تسلی دے رہے ہیں ، اس سانحے کے بعد ہمارے پاس صبر اور تسلی کے سوا کچھ نہیں ہے ۔ حادثہ سے ہمارے دل چھلنی ہوگئے ہیں۔ سلمان الخبرانی نے مزید کہا مجھے نہیں معلوم تھا کہ بھائی اور اس کے ساتھ گزارا گیا یہ وقت آخری ہے۔

مرحوم یحییٰ حسین الخبرانی نے ’’ العارضہ‘‘ گورنری کے جنوب مغرب میں واقع الجوا ایجوکیشنل کمپلیکس میں ایک استاد اور ایک سکول ایجنٹ کے طور پر تقریباً 30 سال شعبہ تعلیم سے وابستہ رہ کر گزارے ہیں۔ انہیں تعلیمی برادری اور اپے ارد گرد کے لوگوں میں بڑی عزت اور محبت حاصل تھی۔ یحییٰ الخبرانی اعلی اخلاق والے نرم خو انسان تھے۔ ان کے چہرے پر ہر وقت مسکراہٹ رہتی تھی۔ سکول کے استاتذہ، والدین اور میڈیا کے پیشہ ور افراد نے یحییٰ الخبرانی کی وفات پر پیچھے رہ جانے والے لواحقین سے اظہار تعزیت کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں