ایران کے سرکاری ٹی وی پر بوس وکنار کا منظر دکھائے جانے پر چینل کی معذرت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ایران کے سرکاری ٹی وی پر ایک جوڑے کے درمیان بوس وکنار کا مختصر سین دکھائے جانے کے بعد قومی ٹی نے اس اقدام پر معافی مانگ لی۔اسلامی جمہوریہ کے زیر انصرام چلنے والے سرکاری ٹی وی پر مرد وزن کی جسمانی قربت سے متعلق مناظر دکھائے جانے پر پابندی عاید ہے۔

مقامی ذرائع نے متنازعہ منظر کی تفصیل سے متعلق بتایا ’’کہ نسیم انٹرٹینمنٹ چینل کے ایک شو میں نوجوان جوڑے کو چند سیکنڈ پر محیط ایک سین میں بوس وکنار کرتے ہوئے دکھایا۔ یہ سین ایک پرینک شو کے لئے تھا جس میں جوڑے کے درمیان جذباتی تعلق نمایاں کرنا مقصود تھا۔

’’چار ناقابل یقین’’ نامی شو کا متنازعہ حصہ سوشل میڈیا پر وائرل ہو گیا۔ جس لمحہ پرینک شو ریکارڈ ہو رہا تھا عین اسی وقت منظر میں دکھائی دینے والا جوڑا تہران کے ایک پارک میں کیمرے کے سامنے واک کر رہا تھا۔

ایسنا نیوز ایجنسی کی طرف سے جمعہ کے روز جاری کردہ بیان میں نسیم نے ’’پروڈکشن ٹیم کی غفلت کے نتیجے میں سامنے آنے والے غلطی پر معافی مانگی ہے۔‘‘

بیان کے مطابق ’’باقاعدہ انکوائری کے بعد چینل اس غفلت کے ذمہ دار افراد کو کڑی سزا دے گا‘‘

یاد رہے 2021 میں سرکاری ٹی وی کے دو میاں بیوی پریزنٹرز ایک براہ راست پروگرام میں ایک دوسرے کو گلے لگانے پر معذرت کر چکے ہیں، اس واقعے نے ابھی ایک بڑے تنازع کو جنم دیا تھا۔ دونوں کا موقف تھا کہ معانقہ کرتے وقت انہیں معلوم نہیں ہو سکا کہ وہ آن ایئر ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں