دمشق پر اسرائیل کا حملہ، ایک ایرانی ہلاک، پاسداران انقلاب نے تصدیق کردی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیل نے 24 گھنٹوں سے بھی کم عرصے میں شام میں دوسرا حملہ کردیا۔ ایرانی پاسداران انقلاب نے جمعہ کی صبح بتایا کہ اسرائیلی حملے میں اسکا ایک مشیر مارا گیا ہے۔

شام کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ’’ سانا‘‘ کے مطابق جمعہ کی صبح اسرائیلی میزائلوں نے دمشق کے جنوب مغرب میں مقامات کو نشانہ بنایا۔ ان میزائل حملوں سے مادی نقصان ہوا اور دو شامی فوجی زخمی ہوئے۔

تاہم ایرانی پاسداران انقلاب نے دوبارہ ایک بیان جاری کیا جس میں اس نے اپنے ایک رکن فوجی میلاد حیدری کی ہلاکت سے آگاہ کیا اور بتایا کہ اس حملے میں دمشق کے نواحی علاقوں کو نشانہ بنایا گیا ہے۔ تسنیم ایجنسی کے مطابق میلاد حیدری شام میں ایرانی پاسداران انقلاب کے مشیروں اور افسروں میں سے ایک تھا۔

خیال رہے اسرائیل نے شام کے دارالحکومت دمشق کے قریب جمعرات کو صبح سویرے بھی حملہ کیا تھا۔ 24 گھنٹوں میں اسرائیل نے دمشق کے قریب دوسرا حملہ کیا ہے۔

سیریئن آبزرویٹری فار ہیومن رائٹس کے مطابق اسرائیلی میزائلوں نے دمشق کے جنوب مغرب میں شامی حکومت اور ایران نواز فورسز کے فوجی ٹھکانوں کو نشانہ بنایا ہے۔ خیال رہے تل ابیب نے گزشتہ برسوں میں شام میں سینکڑوں فضائی حملے کیے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں