مسجد اقصیٰ پر اسرائیلی حملے کی مذمت کرتے ہیں: یو اے ای

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات کی وزارت خارجہ نے بھی بدھ کے روز اسرائیلی پولیس کی جانب سے مسجد اقصیٰ پر حملے کی شدید مذمت کی ہے۔

وزارت خارجہ کے بیان کے مطابق یو اے ای نے اسرائیلی حکام پر زور دیا ہے کہ وہ کشیدگی میں بڑھاوے کو روکیں کیونکہ اس سے خطہ عدم استحکام کا شکار ہوتا ہے۔

ادھر خلیج تعاون کونسل کے جنرل سیکرٹری جاسم محمد البدوی نے ’’قابض اسرائیلی فورسز کی طرف سے مسجد اقصیٰ پر مسلسل حملوں کی مذمت کی ہے۔‘‘

سعودی پریس ایجنسی ’’ایس پی اے‘‘ کی طرف جاری کردہ بیان میں جاسم البدوی کا کہنا تھا کہ مسجد اقصی کا تقدس پامال کرتے ہوئے قابض فوج کے اس پر مسلسل حملے، اس میں عبادت کرنے والوں پر تشدد دراصل صورت حال کو مکدر کرنے کی سوچی سمجھی کوشش ہے۔ یہ اقدامات بین الاقوامی اصولوں، مذہبی تقدس کے اصولوں اور بین الاقوامی قانون اور قراردادوں کی صریح خلاف ورزی ہیں۔‘‘

اسرائیلی پولیس نے منگل اور بدھ کی درمیانی شب مقبوضہ بیت المقدس میں واقع مسلمانوں کے تیسرے مقدس ترین مقام مسجد اقصیٰ میں دھاوا بول کر درجنوں نمازیوں کو زخمی کر دیا۔

فلسطینی ہلال احمر نے کہا کہ مسجد اقصیٰ کے احاطے میں اسرائیلی پولیس کے حملے میں ربڑ کی گولیوں اور مار پیٹ سے ابتدائی طور پر سات فلسطینیوں کے زخمی ہونے کی اطلاع تھی۔ ہلال احمر نے مزید کہا گیا کہ اسرائیلی فورسز اس کے طبی عملے کو مسجد تک پہنچنے سے روک رہی ہیں۔

سعودی عرب کے ساتھ ساتھ اردن اور مصر نے بھی اس واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں