یمن میں منشیات سے بھرا ایرانی بحری جہاز قبضے میں لے لیا گیا

جہاز میں سوار ملاحوں سے تفتیش شروع کردی گئی، عدلیہ میں پیش کیا جائے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

جمعرات کی شام یمنی حکام نے ملک کے مشرق میں کردیا۔ مشرقی یمن میں سیکورٹی حکام نے کہا کہ المھرہ گورنری میں کوسٹ گارڈ فورسز نے مشرقی شہر ’’ الغیضہ‘‘ کے ساحل سے ایرانمنشیات سے لدے ایک ایرانی بحری جہاز کو قبضے میں لینے کا اعلان ی پرچم والے ایک بحری جہاز سے 3 ٹن نشہ آور چرس اور 173 کلوگرام ہیروئن پکڑی۔

82
82

Advertisement

ڈپٹی ڈائریکٹر جنرل آف سکیورٹی اینڈ پولیس اور گورنریٹ میں کریمنل انویسٹی گیشن کے ڈائریکٹر کرنل احمد علی رعفیت نے بتایا کیا کہ المہرہ کوسٹ گارڈ فورسز نے منشیات کی اس کھیپ کی مالیت کا تخمینہ 7 ارب 900 ہزار یمنی ریال میں لگایا ہے۔

احمد علی رعفیت نے بتایا کہ قبضے میں لیے گئے جہاز پر ایرانی پرچم اور سات ایرانی ملاح سوار تھے۔ ایرانی ملاحوں سے تفتیش کی جا رہی ہے۔ تمام قانونی طریقہ کار مکمل کرکے ان ملاحوں کو عدلیہ کے حوالے کر دیا گیا ہے۔ رعفیت نے ایرانی جہاز کو پکڑنے اور ملاحوں کو حراست میں لینے کے طریقے کی وضاحت نہیں کی۔ ایران نے فوری طور پر بحری جہاز کو قبضے میں لینے کے حوالے سے کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں