سیارہ وینس کا ستاروں کے جھرمٹ ’ثریا‘ سے ملاپ کا منظر جو سال میں ایک ہی بار ہوتا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

گذشتہ شب ایک غیر معمولی خلائی مظہرغروب آفتاب کے بعد خلا میں دیکھا گیا۔ یہ منظر سیارہ زہرہ کا اسٹار کلسٹر کے ساتھ ملاپ ہے۔ خیال رہے کہ اسٹار کلسٹر یا ثریا رات کے آسمان میں سب سے خوبصورت کھلے ستاروں کے جھرمٹ میں سے ایک ہے۔ اس واقعہ کو بڑی اور چھوٹی دوربینوں کے ذریعے دیکھا گیا۔ سعودی عرب میں یہ خلائی منظر زیادی واضح اورخوبصورت دیکھا گیا۔

جدہ میں فلکیاتی سوسائٹی کے سربراہ، انجینیر ماجد ابو زہرہ نے نشاندہی کی کہ سیارہ زہرہ جو اس وقت "شام کے ستارے" کی نمائندگی کرتا ہے کئی ماہ قبل غروب آفتاب کے بعد چمکتا ہے۔ اس کی ظاہری شکل مجرد آنکھوں کے لیے بہت خوبصورت ہے۔ شام کے وقت اس کی روشنی روشن مینار کی طرح جنوب مغربی افق کو سجاتی ہے اور یہ ستاروں کے جھرمٹ سے الگ چمکتا دیکھا جا سکتا ہے۔

جب مبصر دوربین کو زہرہ کی طرف لے جاتا ہے تو ثریا جھرمٹ سیارے کے دائیں طرف اسی میدان میں نظر آئے گا جو انہیں دو ڈگریوں سے الگ کرے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ وینس اس وقت زمین سے صرف 160 ملین کلومیٹر کے فاصلے پر ہے لیکن Pleiades تقریباً 444 نوری سال کے فاصلے پر ہے۔

ابو زھرہ نے کہا کہ اس جھرمٹ کے روشن ترین نو ستاروں کا نام یونانی افسانوں میں ان کے والدین کے ساتھ سات بہنوں کے نام پر رکھا گیا تھا۔ اس جھرمٹ میں مجموعی طور پر تقریباً 3000 ستارے شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں