سعودی عرب میں کن سیاحتی سرگرمیوں کے لیے پیشگی لائسنس کی ضرورت ہوگی؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کی وزارت سیاحت نے ایک بار پھر 7 سیاحتی سرگرمیوں کو باقاعدہ منظوری اور لائسنس کے حصول کی شرط کے ساتھ مشروط کیا ہے۔اس اقدام کا مقصد مستفید ہونے والے افراد کو معیاری سروسز کی فراہمی کو یقینی بنانا ہے۔

وزارت سیاحت نے کہا کہ ان سرگرمیوں میں سفر اور سیاحتی خدمات، سیاحتی مہمان نوازی کی سہولت، مہمان نوازی کی سہولیات کا انتظام، نجی سیاحت کی مہمان نوازی کی سہولت، سیاحتی رہ نمائی، سیاحتی مشاورت اور آخر میں تجرباتی سرگرمیاں شامل ہوں گی۔

وزارت سیاحت نے نئے سیاحتی نظام کی خلاف ورزی کرنے والوں سے کہا تھا کہ وہ شرائط اور قواعدو ضوابط پرعمل درآمد کریں، سیاحتی سرگرمیوں کے لیے لائسنس جاری کروائیں ورنہ خلاف ورزی پر 10 لاکھ ریال کی سزا ہوسکتی ہے۔

وزارت سیاحت نے مملکت کے اندر سیاحتی شعبوں میں سرمایہ کاروں پر بھی زور دیا کہ وہ حال ہی میں جاری کیے گئے اس کے نئے ضوابط پر عمل کریں، جن کا مقصد سیاحت کے شعبے کو ترقی دینا اور بین الاقوامی بہترین طریقوں کے مطابق فراہم کی جانے والی خدمات کے معیار کو بہتر بنانا اور سیاحوں کے حقوق کا تحفظ کرنا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں