مکہ مکرمہ لائبریری نے 37 ویں تونس عالمی کتاب میلے میں تاریخی مخطوطات پیش کردیے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب میں اسلامی امور، دعوت و رہنمائی کی وزارت نے - مکہ مکرمہ کی لائبریری کی نمائندگی کرتے ہوئے - 37 ویں تونس بین الاقوامی کتاب میلے میں متعدد تاریخی مخطوطات پیش کردیے۔ کتاب میلہ 28 اپریل سے 7 مئی تک دارالحکومت تونس میں منعقد ہو رہا ہے۔ نمائش میں شرکت کرنے والے سعودی عرب کے پویلین کے اندر وزارت نے اپنے کارنر پر قدیم مخطوطات کی نمائش کا اہتمام کیا ہے۔

ان مخطوطات میں 1270 ہجری میں لکھے گئے قرآن کریم کا ایک نادر نسخہ بھی پیش کیا گیا ہے۔ اسی طرح نمائش کے دیگر اہم مخطوطات میں امام شاطبی کی معروف کتاب ’’ حرز الامانی و وجہ التھانی‘‘ کا نسخہ بھی رکھا گیا ہے۔ اس کتاب کو ’’الشاطبیہ‘‘ کے نام سے جانا جاتا ہے۔ یہ نسخہ 724 ہجری میں لکھا گیا تھا۔ امام نووی کی دعاؤں کی کتاب الاذکار کا مخطوطہ بھی موجود ہے جو 786 ہجری میں لکھا گیا۔ اور ابن دقیق العید کی کتاب ’’احکام الاحکام‘‘ کا مخطوطہ بھی رکھا گیا ہے جو 793 ہجری میں لکھا گیا۔

سعودی عرب کے پویلین کے اندر وزارت  نے اپنے کارنر پر قدیم مخطوطات  کی نمائش کا اہتمام کیا
سعودی عرب کے پویلین کے اندر وزارت نے اپنے کارنر پر قدیم مخطوطات کی نمائش کا اہتمام کیا

نمائش میں امام السیوطی کی کتاب ’’ الجامع الصحیح‘‘ پر حاشیہ کا مخطوطہ بھی موجود ہے۔ یہ حاشیہ 995 ہجری میں لکھا گیا تھا۔ ابن حجر کی تحریر کردہ کتاب ’’الفتح المبین‘‘ کا 975 ہجری کا لکھا گیا مخطوطہ بھی موجود ہے۔ امام سیوطی کی 884 ہجری میں لکھی گئی کتاب ’’ النھجۃ المرضیہ شرح الالفیہ‘‘ کا نادر مخطوطہ بھی لوگوں کی توجہ حاصل کر رہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں