غزہ وحماس

اسرائیلی بمباری کی گھن گرج، فلسطینی بچہ خوف و ہراس سے چل بسا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

غزہ کی پٹی پر خوفناک اسرائیلی بمباری جاری ہے۔ مقامی میڈیا نے وزارت صحت کے حوالے سے بتایا کہ غزہ کی پٹی پر اسرائیل کے فضائی حملوں کے دوران شدید خوف و ہراس کا شکار ہوکر ایک فلسطینی بچہ جاں بحق ہوگیا۔

رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ تمیم داؤد کی دل کی بیماری کا علاج چل رہا تھا۔ تمیم داؤد ان 25 شہریوں میں شامل ہے جو اسرائیلی چھاپوں میں مارے گئے ہیں۔ صہیونی فوج کی کارروائی میں 40 افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

داؤد تمیم کی والدہ نے مقامی میڈیا کو بتایا کہ داتد کا علاج بہتر چل رہا تھا اور وہ بحالی کی جانب چل رہا تھا۔ وہ کنڈر گارٹن جا رہا تا کہ اس پر گھبراہٹ کا حملہ ہوگیا۔ منگل کی شام جب غزہ کی پٹی میں زور دار دھماکے ہوئے تو داؤد پر شدید خوف و ہراس کا حملہ ہوا ۔ اسے فوری طور پر ہسپتال لے جایا گیا۔ داتد تمیم آئی سی یو میں رہا۔ ڈاکٹروں نے بتایا کہ بدھ کی صبح اس کی موت ہوگئی کیونکہ اس کا دل خوف کو برداشت نہیں کر سکتا تھا۔ اسرائیل کے فضائی حملوں اور چھاپوں میں اس سال کم از کم 125 فلسطینی ہلاک ہو چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں