دھڑ جڑی دو نائیجیریائی بچیوں کو علیحدہ کرنے کے لیے سعودی عرب میں طویل آپریشن جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

دو نائیجیریائی دھڑ سے جڑی ہوئی بچیوں حسنہ اور حسینہ کو علیحدہ کرنے کے لیے ایک طویل آپریشن جمعرات کی صبح سعودی عرب میں شروع ہوا۔

آپریشن ریاض کے شاہ عبداللہ سپیشلائزڈ چلڈرن ہسپتال میں ہو رہا ہے۔

سرجیکل ٹیم کے انچارج اور شاہ سلمان ہیومینٹیرین ایڈ اینڈ ریلیف سنٹر کے سپروائزر جنرل ڈاکٹر عبداللہ بن عبدالعزیز الربیعہ کے مطابق یہ آپریشن 14 گھنٹے تک جاری رہنے کی توقع ہے اور یہ آٹھ مختلف مراحل میں ہوگا۔

جڑواں بچیاں، جو 2022 میں پیدا ہوئی تھیں، کے پیٹ، جگر، آنتیں، پیشاب اور تولیدی نظام اور ہڈیاں آپس میں جڑی ہوئی ہیں۔

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق، ڈاکٹروں، طبی ماہرین کی 35 افراد کی ٹیم اس آپریشن میں حصہ لے رہی ہے۔

ڈاکٹر الربیعہ نے کہا کہ جمعرات کا آپریشن 1990 سے مملکت میں ہونے والا ایسا 56 واں کیس ہے۔

دونوں بچیاں گذشتہ برس دسمبر میں انسانی ہمدردی کے تحت نائجیریا سے سعودی عرب لائی گئی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں