سعودی عرب: وسیع تنازع کے بعد طلبہ کی تھیٹر پرفارمنس کی تحقیقات کی ہدایت

ویڈیو کلپ میں کئی طالبات کو عبایا اتار کر زمین پر پھینکتے ہوئے دکھایا گیا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

القصیم ریجن میں جنرل ایڈمنسٹریشن آف ایجوکیشن نے طالب علم کی تھیٹر پرفارمنس میں سے ایک کے بارے میں تحقیقات شروع کرنے کی ہدایت کردی۔ اس تھیٹر پرفارمنس کے خلاف سوشل میڈیا نیٹ ورکنگ ویب سائٹس پر بڑے پیمانے پر احتجاج کیا گیا تھا۔

انتظامیہ نے بتایا کہ القصیم میں ڈائریکٹر جنرل آف ایجوکیشن نے تھیٹر شو "افق" کے مواد کی تحقیقات، ضروری نظام کی تکمیل اور تہوار کے پروگراموں کی نگرانی کے لیے ایک کمیٹی تشکیل دینے کی ہدایت کردی ہے۔ یہ کمیٹی انتظامیہ اور سکول کی سطح پر منعقد کیے جانے والے تھیٹر شوز کا جائزہ لے گی۔

انہوں نے عندیہ دیا کہ کمیٹی اسلامی اقدار اور تعلیمات سے نکلنے والے تعلیمی کردار کے مواد کی تیاری کا جائزہ لینا شروع کرے گی۔ ذرائع نے اس بات کی تصدیق کی کہ تھیٹر پرفارمنس ایک تقریب کے ایک حصے کے طور پر پیش کی گئی جس میں بریدہ شہر میں ایک کنڈرگارٹن کے نمایاں طلبہ کے اعزاز میں منعقد کیا گیا تھا۔ یہ تقریب گزشتہ ہفتے القصیم ایجوکیشن کی عمارت کے ایک ہال میں منعقد کی گئی تھی۔ تقریب میں ان کے انچارجوں نے شرکت کی تھی ۔ ڈرامے کو تحقیقات کے لیے لایا گیا اور قواعد و ضوابط کے مطابق جوابدہ ٹھہرایا گیا۔

سوشل میڈیا پر تھیٹر کے شو سے ایک ویڈیو کلپ نشر کیا گیا ہے جس میں کئی طالبات کو ہلکی گیند کے ساتھ حرکت کرتے ہوئے ایک طالب علم کے سامنے قطار میں کھڑے دکھایا گیا تھا۔ پھر وہ چادر اُتار کر زمین پر پھینک دیتی ہیں۔ اس منظر نے شو کے پیش کردہ پیغام کے بارے میں ایک وسیع بحث شروع کرا دی۔

مقبول خبریں اہم خبریں