اردن میں خوفناک ژالہ باری، سینکڑوں گاڑیوں کی شیشے ٹوٹ گئے

بارشوں کے باعث سیلاب میں کاریں بہنے لگیں، ایک شخص جاں بحق، متعدد زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اردن کی مختلف گورنریوں میں ژالہ باری نے سینکڑوں گاڑیوں کے شیشے توڑ دئیے۔ بارشوں کے باعث سیلاب میں کاریں بہنے لگیں اور انہیں شدید نقصان پہنچا ہے۔ موسمی عدم استحکام کے باعث ہونے والی تباہی کے دوران ایک شہری جاں بحق اور متعدد زخمی ہوگئے۔

پبلک سیکورٹی ڈائریکٹوریٹ نے موجودہ موسمی حالات کے نتیجے میں خبردار کردیا اور کہا کہ مسلسل موسمی عدم استحکام کی روشنی میں مزید موسمی خطرات بھی موجود ہیں۔ آنے والے دنوں میں جنوبی اور جنوب مشرقی علاقوں میں بارش اور گرد آلود ہوائیں چلنے کا امکان ہے۔

خوفناک ژالہ باری

سول ڈیفنس اور عقبہ پولیس میں ریسکیو کیڈرز کی رپورٹ میں بتایا گیا کہ عقبہ گورنریٹ کے الشامیہ علاقے میں طوفانی بارشوں کے باعث ایک گاڑی بہ گئی جس میں دو افراد سوار تھے۔

پبلک سیکیورٹی ڈائریکٹوریٹ کے کرنل عامر السرتاوی نے ’’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘‘ کو بتایا کہ شہری دفاع کی ٹیموں اور عقبہ پولیس نے واقعے پر ردعمل ظاہر کیا اور ایک شخص کو بچا لیا ہے۔ تاہم دوسرے کو بچایا نہ جا سکتا اور صبح ان کی لاش مل گئی ۔

دارالحکومت عمان کے شمال میں ابو نصیر اور شفا بدران کے علاقوں میں بڑے سائز کے اولوں نے تباہی مچا دی۔ ان اولوں نے سینکڑوں گاڑیوں کے شیشے توڑ دئیے اور گاڑیوں کے آہنی ڈھانچے کو بھی نقصان پہنچایا۔ عمارتوں کی چھتوں پر واقع سولر ہیٹروں کے پینلز کی ایک بڑی تعداد بھی بڑے اولے گرنے سے تباہ ہو گئی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں