مغربی کنارہ: اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے تین سالہ بچے سمیت دو افراد زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

مقبوضہ مغربی کنارے میں اسرائیلی فوج کی جانب سے ایک فلسطینی گاڑی پر فائرنگ کے نتیجے میں ایک تین سالہ فلسطینی بچے سمیت دو افراد زخمی ہو گئے۔

اسرائیلی فوج کے مطابق جمعہ کی صبح پیش آنے والے فائرنگ کے واقعہ کی تحقیقات کی جا رہی ہیں۔

فوج کے ایک بیان میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ اسرائیلی فوجی ناکے پر مسلح افراد نے فائرنگ کی جس کے جواب میں فائرنگ کے نتیجے میں فلسطینی بچہ اور ایک مرد زخمی ہوگئے۔ زخمی شخص کو فلسطینی ہسپتال منتقل کر دیا گیا جبکہ تین سالہ بچے کو اسرائیل کے شیبا ہسپتال میں بھیج دیا گیا۔

ہسپتال کے مطابق بچے کی حالت تشویشناک ہے۔

اسرائیلی فوج نے چیک پوائنٹ پر مبینہ حملے کی ایک ویڈیو ریلیز کرتے ہوئے کہا کہ عام شہریوں کو گولیاں لگنے کے واقعہ کی تحقیقات کی جا رہی ہیں اور ایسے واقعات کی روک تھام کے لئے ہر ممکن اقدام اٹھایا جا رہا ہے۔

اسرائیل میں دائیں بازو کی جماعتوں کی حکومت کے اقتدار میں آنے کے بعد سے مقبوضہ مغربی کنارے اور مشرقی بیت المقدس میں کشیدگی کے واقعات میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔

ان دونوں علاقوں میں رواں سال کے دوران 120 فلسطینی جاں بحق ہو چکے ہیں۔ اس کے علاوہ فلسطینی حملوں میں 21 آباد کار اور فوجی ہلاک ہو چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں