ماں شاپنگ کرتی رہی اور کار میں چھوڑے دو بچے آگ کی لپیٹ میں آگئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکا میں ایک خاتون اپنے دو بچوں کو اپنی کار میں چھوڑ کر خود شاپنگ کرنے لگیں تو اچانک کار میں آگ بھڑک اٹھی۔ سوشل میڈیا پر اس واقعے پر عوامی حلقوں کی طرف سے سخت برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ماں پر لاپرواہی کا الزام عاید کیا ہے۔

پولیس نے بتایا کہ فلوریڈا سے تعلق رکھنے والی 24 سالہ علیشا مور ایک سٹور کے اندر خریداری کرنے کے لیے گئیں تو دو بچوں کو گاڑی میں چھوڑ دیا جس میں آگ لگ گئی۔

فاکس نیوز کے مطابق حکام نے انکشاف کیا کہ مور نے اپنی کار 26 مئی کو اوویڈو کمپلیکس میں ڈیلارڈ کے اسٹور کے باہر کھڑی کی اور کار کے اندر دو بچوں کو چھوڑ دیا۔

وہ سٹور میں داخل ہوئی اور ایک آدمی کے ساتھ خریداری کرنے لگی اور تقریباً ایک گھنٹے کے بعد وہ سٹور سے نکلی اورتودیکھا کہ اس کی کار میں آگ لگئی ہوئی تھی۔

ایلیسیا مور، 24 سال کی عمر میں
ایلیسیا مور، 24 سال کی عمر میں

عینی شاہدین نے بتایا کہ انہوں نے گاڑی کو آگ لگتے دیکھا اور بچوں کو اندر سے بچانے کے لیے دوڑے۔ اس حادثے میں ایک بچی کے کان اور چہرے کا کچھ حصہ جھلس گیا۔

جبکہ حکام نے بتایا کہ انہیں آگ لگنے کی وجہ معلوم نہیں ہوسکی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں