32 واں دوحہ کتاب میلہ: سعودی نوادرات نے توجہ حاصل کرلی

سعودی عرب مہمان خصوصی کے طور پر شریک ہو رہا، پویلین میں مخطوطات، اشاعتیں اور کتابیں رکھی جاتی ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب ہیریٹیج اتھارٹی کی جانب سے 32ویں دوحہ بین الاقوامی کتاب میلے میں تاریخی یاد گاروں کے ایک گروپ کے ساتھ شرکت کی جارہی ہے۔ یہ نمائش دوحہ نمائش و کنونشن سنٹر میں منعقد ہو ہو رہی اور 21 جون تک جاری رہے گی۔ سعودی پویلین اس سال بھی توجہ حاصل کررہا۔

سعودی پویلین میں کچھ اصل نوادرات کی نقلیں شامل ہیں جیسے تیما میں دریافت ہونے والا ایک مقبرہ، جس پر چوتھی اور پانچویں صدی قبل مسیح کے درمیان انسانی خصوصیات تراشی گئی تھیں۔ چونے کے پتھر کے انسانی مجسمے کا ایک حصہ جو چوتھی صدی قبل مسیح کا تھا۔

سعودی نوادرات

پویلین میں دو لوگوں کی رنگین دیواری پینٹنگ کا ایک حصہ دکھایا گیا ہے جس میں انگوروں کا ایک گچھا ہے جس کے سامنے ایک آدمی ہے جس کی آنکھیں بڑی ہیں اور ایک پتلی مونچھیں ہیں اس پر نام (ZKY) کندہ ہے۔ یہ پینٹنگ پہلی اور دوسری صدی عیسوی کے درمیانی وقت کی ہے۔ اسے ریاض کے علاقے کے جنوب میں واقع "الفاو گاؤں" میں دریافت کیا گیا تھا۔ اس کے علاوہ چونے کا پتھر بھی ہے جس میں سجاوٹ ہے ، جانوروں کی تصویریں اور مسند رسم الخط میں لکھی گئی عبارت ہے۔ یہ پتھر بھی اسی گاؤں سے دریافت ہوا تھا۔

پویلین میں فنیری ماسک کی نقل اور ہاتھ (دستانے) کی شکل میں سونے کا ایک ٹکڑا بھی رکھا گیا ہے جو پہلی صدی عیسوی کا ہے۔ یہ سعودی علاقے الشرقیہ میں ثاج میں دریافت ہوا تھا۔ اس کے علاوہ کانسی کے شیر کے سر اور پنجہ جو دوسری صدی عیسوی کا ہے بھی ہے جو نجران کے علاقے میں دریافت ہوا۔ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے مقدس مقام سے ایک بانی نوشتہ ہے جسے معروف مورخ "شیخ احمد الصاوی" نے وقف کیا تھا۔

واضح رہے سعودی عرب دوحہ بین الاقوامی کتاب میلے میں مہمان خصوصی کے طور پر شرکت کر رہا ہے۔ سعودی عرب کی پویلین میں تاریخی یادگاروں، مخطوطات، اشاعتوں اور مختلف ثقافتی اور سائنسی پہلوؤں پر کتابوں کے علاوہ تقریباً 45 مختلف سرگرمیوں کا اہتمام کیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں