حج سیزن

عمر 103 سال، عراقی کردستان سے حج کے لیے جانے والی معمرترین خاتون دیکھیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اپنی زیادہ عمر کی وجہ سے مسلسل تین مرتبہ انکار کے بعد عراقی کردستان کی رہائشی رابی علی کو اس سال حج ادا کرنے کی اجازت مل گئی۔ رابی علی کی عمر 103 سال ہے اور عراقی کردستان سے بیت اللہ شریف کی زیارت کے لیے جانے والوں میں وہ سب سے معمر ہیں۔ رابی علی نے اسلام کے پانچویں ستون ’’ حج‘‘ کے مناسک ادا کرنے کی اجازت ملنے پر بے انتہا خوشی کا اظہار کیا ہے۔

رابی علی عراق کے کردستان علاقے کی پہاڑیوں کی بلندیوں پر ضلع جومان میں ایک پرانے گھر میں رہتی ہیں۔ ان کے گھر سے عراق کی سب سے اونچی پہاڑی چوٹی نظر آتی ہے۔ یہ عراق، ترکیہ اور ایران کی سرحد سے ملا ہوا پہاڑ ’’ حصاروست‘‘ ہے۔

کرد بزرگ خاتون رابی علی
کرد بزرگ خاتون رابی علی

حجہ رابی علی نے ’’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘‘ کو بتایا کہ عمر یا دیگر وجوہات کی وجہ سے انکار کے تین سال بعد حج کرنے کا موقع ملنے پر مجھے بہت خوشی ہوئی۔ اللہ کا شکر ہے آخر کار اب میں حج کی ادائیگی کے لیے سفر کروں گا اور ارض مقدس کی زیارت کروں گی ۔

کردستان کے علاقے میں حج مشن کے میڈیا اہلکار کاروان سٹونی نے ’’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘‘ کو تصدیق کی کہ معمر رابی علی عراق کے کردستان علاقے میں خانہ کعبہ کی معمر ترین حجاج ہیں۔ سعودی حکام کی جانب سے عازمین حج کے لیے عمر کی شرط ختم کی گئی تو ان کے لیے بھی حج کے لیے منظوری حاصل ممکن ہوگیا تھا۔

کرد بزرگ خاتون رابی علی کا گھر
کرد بزرگ خاتون رابی علی کا گھر

العربیہ ڈاٹ نیٹ نے معمر خاتون رابی علی کی تصویر بھی بنائی۔ ان کے شناختی کارڈ پر ان کی تاریخ پیدائش یکم جولائی 1920 درج ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں