مدینہ منورہ: شدید دماغی نکسیر کے شکار عراقی حاجی کی جان بچالی گئی

عراقی شہری اعضا میں کمزوری کے باعث شعور کی کمی اور چلنے پھرنے میں دشواری کا سامنا کر رہا تھا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مدینہ منورہ میں اتوار کے روز کنگ فہد ہسپتال میں نیورو سرجری میں مہارت رکھنے والی ایک طبی ٹیم نے ستر کی دہائی کی عمر کے ایک عراقی حاجی کی جان بچانے میں کامیاب حاصل کرلی۔ اس عراقی عازم حج کو شدید دماغی نکسیر کا سامنا تھا۔

اس عراقی کو کنگ فہد ہسپتال کے ایمرجنسی روم میں لایا گیا تھا ۔ وہ اعضاء میں کمزوری کے باعث شعور کی کمی اور چلنے پھرنے میں دشواری کا شکار تھا۔

المدینہ المنورۃ کے ہیلتھ افیئرز کے شعبہ نے بتایا کہ طبی ٹیم نے جان بچانے والے کیس کے طور پر مریض کو فوری طور پر آپریٹنگ روم میں منتقل کیا۔ خون بہنے کا عمل جاری کیا گیا۔ آپریشن کامیاب رہا اور اب مریض مکمل صحت یابی کی طرف گامزن ہے۔ توقع ہے کہ وہ حج کے مناسک کےآغاز تک اچھی صحت کی حالت می ہوگا۔

واضح رہے وزارت صحت نے ذو القعد کے آغاز سے اب تک 32 ہزار سے سے زیادہ عازمین حج کو طبی خدمات فراہم کی ہیں۔ ان خدمات میں 99 جراحی آپریشنز بھی شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں