حالیہ برسوں میں دنیا بھر میں یہودیوں پر 50 ایرانی حملوں کو ناکام بنا چکے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی وزیر دفاع یوو گیلنٹ نے کہا ہے کہ اسرائیل اور اس کے بین الاقوامی شراکت داروں نے حالیہ برسوں میں دنیا بھر میں اسرائیلیوں اور یہودیوں پر 50 سے زائد ایرانی دہشتگرد حملوں کو ناکام بنا دیا ہے۔

یروشلم پوسٹ نے گیلنٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ایرانی سپریم لیڈر علی خامنہ ای کے حکم سے حالیہ برسوں میں ایران نے دہشت گردی کی ایک بے مثال عالمی مہم کی قیادت کی ہے۔ اس مہم میں پوری دنیا میں اسرائیلیوں اور دیگر یہودیوں پر توجہ مرکوز کی گئی ہے۔ حالیہ برسوں میں یہودیوں پر حملوں کی ایسی 50 سے زیادہ کوششیں ہو چکی ہیں جن کو ناکام بنا دیا گیا۔ ان میں سے اکثریت کو عمل درآمد کے آخری لمحات میں ناکام بنایا گیا۔

گیلنٹ نے کہا ان حملوں کو اسرائیل کی دفاعی اسٹیبلشمنٹ کی بدولت اور بہت سے بیرونی ملکوں کے ساتھ قریبی تعاون کی وجہ سے ناکام بنایا گیا۔

خیال رہے اسرائیل اور ایران سرد جنگ سے مشابہ ایک طویل اور خفیہ جنگ میں مصروف ہیں۔ اس جنگ میں ایک دوسرے پر تخریب کاری اور قتل کی سازشوں کے الزامات بھی لگائے جاتے ہیں۔ دونوں ملکوں نے خفیہ کارروائیوں، انٹیلی جنس جنگوں اور پراکسی تنازعات کے ذریعے اپنے قومی سلامتی کے مفادات کو مسلسل آگے بڑھایا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں