سعودی ولی عہد کی جاپان میں کمپنیوں کے سربراہوں اور کاروباری افراد سے ملاقات

کاربن غیرجانبداری کے حصول کے لیے توانائی کے شعبے میں سعودی عرب اور جاپان کے درمیان تعاون

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی ولی عہد اور وزیراعظم شہزادہ محمد بن سلمان نے جاپان کے وزیراعظم فومیو کشیدا کی موجودگی میں جاپان میں کمپنیوں کے سربراہوں اور کاروباری مالکان سے ملاقات کی۔

اتوار کی شام جدہ کے ’’السلام‘‘ محل میں شاہی دربار میں ولی عہد اور جاپانی وزیر اعظم کے درمیان بات چیت کے سیشن کے بعد ولی عہد نے جاپانی کمپنیوں کے وفد سے ملاقات کی۔

سعودی وزیر سرمایہ کاری انجینئر خالد الفالح کے مطابق جاپانی وزیر اعظم کے ہمراہ آنے والے وفد میں 44 معروف جاپانی بڑی کمپنیوں کے نمائندے اور مختلف شعبوں میں دیگر ابھرتی ہوئی اور اختراعی کمپنیوں کے افراد شامل ہیں۔

خالد الفالح نے گزشتہ روز العربیہ کے ساتھ ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ ہم جاپان کے ساتھ اپنی شراکت داری میں ایک نئے دور کا آغاز کر رہے ہیں۔ ہم جاپان کے ساتھ کئی شعبوں میں شراکت داری کو مضبوط کریں گے اور ہم نے مختلف شعبوں میں جاپان کے ساتھ 26 معاہدوں پر دستخط کیے ہیں۔

جاپان کی پبلک انفارمیشن اتھارٹی کی بین الاقوامی سروس کے مطابق سعودی ولی عہد محمد بن سلمان اور جاپانی وزیر اعظم فومیو کشیدا نے کاربن نیوٹرل سوسائٹی کے حصول کے لیے توانائی کے شعبہ میں اپنے ملکوں کے درمیان تعاون کے عزم کا اظہار کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں