سوڈان کے دونوں فریق فوجی کشیدگی ختم کریں: سعودی عرب

تنازع کا سیاسی حل نکالا جائے اور عوام کی سلامتی اور استحکام کو یقینی بنایا جائے: شہزادہ فیصل بن فرحان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ہفتے کے روز سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان نے سوڈانی فریقین پر زور دیا کہ وہ قومی مفاد کو ترجیح دیتے ہوئے جھگڑا ختم کریں اور ہر قسم کی فوجی کشیدگی کو روک دیں۔

سعودی وزارت خارجہ نے کہا کہ شہزادہ فیصل کو سوڈانی خود مختاری کونسل کے سربراہ عبدالفتاح البرہان کا فون آیا جس کے دوران انہوں نے سوڈان کی صورتحال میں پیشرفت پر تبادلہ خیال کیا۔

شہزادہ فیصل نے سوڈانی جماعتوں سے ایک ایسے سیاسی حل کا سہارا لینے کے لیے مملکت کے مطالبے کی تجدید کی جو سوڈان اور اس کے عوام کو سلامتی اور استحکام کی واپسی کی ضمانت دیتا ہے

۔

سعودی وزیرخارجہ فیصل بن فرحان
سعودی وزیرخارجہ فیصل بن فرحان

کال کے دوران شہزادہ فیصل نے انسانی ہمدردی کے کاموں کی بحالی پر زور دیا۔ شہزادہ فیصل نے کہا کہ شہریوں اور امدادی کارکنوں کی حفاظت اور بنیادی امداد کی آمد کے لیے انسانی ہمدردی کی راہداریوں کی حفاظت کے لیے سوڈانی جماعتوں کے عزم پر عمل درآمد کیا جائے۔

اس سے قبل ہفتے کے روز سوڈان کی عبوری خودمختاری کونسل کے نائب سربراہ مالک عقار نے روس کے ’’ آر ٹی‘‘ ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ فوج اور ریپڈ سپورٹ فورسز کے درمیان بات چیت کے لیے کوئی شرائط نہیں ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ اب ترجیح جنگ کو روکنا ہے۔

سوڈانی فوج نے ہفتے کی شام ریپڈ سپورٹ فورسز پر آرمرڈ کور کے قریب واقع رمیلہ محلے پر بمباری کا الزام لگایا۔ اس بمباری میں ایک ہی خاندان کے 4 بچے اور ایک خاتون جاں بحق ہوگئی تھی۔

سوڈانی مسلح افواج کی جنرل کمان کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا کہ نہتے شہریوں کے خلاف اپنی وحشیانہ خلاف ورزیوں اور شہریوں کو زبردستی ان کے گھروں سے بے گھر کرنے کی کوششوں کے تسلسل میں باغی ملیشیا نے ہفتے کی شام رمیلہ محلے میں بمباری کرکے ایک خاندان کے پانچ افراد کو موت کے منہ میں دھکیل دیا ہے۔

اس سے قبل سوڈانی فوج کے ذرائع نے ہفتہ کو کہا کہ ریپڈ سپورٹ فورسز کے 20 ارکان بکتر بند کور پر حملے کی کوشش کے دوران مارے گئے تھے۔ ریپڈ سپورٹ فورسز نے بکتر بند ہتھیاروں سے ہماری اہم ترین افواج پر حملہ کیا تھا۔

سوڈان میں امریکی سفارت خانے نے جمعہ کو فوج اور ریپڈ سپورٹ فورسز سے لڑائی بند کرنے اور انسانی امداد تک بلا روک ٹوک رسائی کی سہولت فراہم کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں