فلسطین اسرائیل تنازع

مغربی کنارے میں فائرنگ سے 6 اسرائیلی آبادکار زخمی، فلسطینی جاں بحق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مقبوضہ مغربی کنارے میں اسرائیلی سکیورٹی فورسز نے ایک فلسطینی کو گولی مار کر موت کی نیند سلا دیا ہے۔اطلاعات کے مطابق مقبوضہ مغربی کنارے میں واقع بڑی یہودی بستی معالی اَدومیم میں ایک شاپنگ مال کے باہر فائرنگ کے نتیجے میں چھے اسرائیلی آبادکار زخمی ہو گئے ہیں۔

اسرائیلی ایمرجنسی سروسز کا کہنا ہے کہ ان اسرائیلیوں میں سے ایک کی حالت تشویش ناک ہے۔

اسرائیلی پیرامیڈک اورین برل نے بتایا کہ ’’ہم معالی اَدوميم میں ایک ریستوراں میں گئے جہاں ہم نے دیکھا کہ فائرنگ کی زد میں آنے والا ایک شخص مکمل طور پر ہوش میں ہے اور اس کے جسم کے اوپری حصے پر گولیوں کے زخم ہیں‘‘۔

سوشل میڈیا پر زیرگردش فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ حملہ آور پیلے رنگ کی چمکدار جیکٹ پہنے زمین پر بے حس وحرکت پڑا ہے، جبکہ اس کے جسم سے خون بہ کرنیچے فٹ پاتھ پر جا رہا ہے۔

غزہ کی پٹی کی حکمران فلسطینی جماعت حماس کا کہنا ہے کہ یہ حملہ گذشتہ ہفتے اسرائیلی حکام کے مقبوضہ بیت المقدس میں مسجداقصیٰ پر دھاوے کے جواب میں کیا گیا ہے۔

اسرائیل کے چینل 12 کا کہنا ہے کہ فلسطینی حملہ آور کو ایک آف ڈیوٹی افسر نے گولی ماری ہے۔

اسرائیل کے مقبوضہ مغربی کنارے میں گذشتہ پندرہ ماہ سے بدترین تشدد کا سلسلہ جاری ہے۔اسرائیلی فوج کی چھاپا مار کارروائیوں، فلسطینیوں کی سڑکوں پر کارروائیوں اور فلسطینی دیہات پر یہودی آباد کاروں کے حملوں کی وجہ سے تشدد کا یہ سلسلہ اور بھی بدتر ہو گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں